The news is by your side.

Advertisement

لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیر بلوچ کے گرد گھیرا تنگ

کراچی: پولیس نے لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیر بلوچ کے خلاف ایک اور مقدمے کی پروسیڈنگ بحال کرنے کے لئے عدالت سےرجوع کرلیا ، عدالت نے پولیس کی استدعا منظور کرلی ۔

تفصیلات کے مطابق انسداد دہشت گردی کی عدالت میں لیاری آپریشن کے دوران پولیس پر حملے کے معاملے پر لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیربلوچ کے خلاف گھیرا تنگ کردیا گیا۔

پولیس نے ایک اور مقدمے کی پروسیڈنگ بحال کرنے کے لئے عدالت سےرجوع کرلیا ، تھانہ کلاکوٹ کا کہنا ہے کہ عزیربلوچ کی کسٹڈی سینٹرل جیل کو دے دی گئی ہے، ملزم کے خلاف مقدمے کی سماعت بحال اور کیس کی تاریخ مقرر کریں۔

عدالت نےپولیس کی استدعا منظور کرلی اور عزیربلوچ کے پروڈکشن آرڈرجاری کردیئے۔

یاد رہے اپریل میں جیل حکام نے عزیربلوچ کےخلاف مقدمات کی پروسیڈنگ بحال کرنے کے لیے عدالت سے رجوع کر کے کیسز میں تاریخ مقرر کرنے کی درخواست کی تھی۔

عدالت نے ملزم عزیر بلوچ کے خلاف مقدمات بحال کرنے اور کیسز میں تاریخ مقرر کرنے کی جیل حکام کی استدعا منظور کرتے ہوئے ارشد پپو کیس میں ملزم پر ترمیمی فرد جرم عائد کرنے کے لیے تاریخ مقرر کر دی تھی، اور مختلف کیسز میں پروڈکشن آرڈر جاری کر دیے تھے۔

یاد رہے کہ عزیر بلوچ کے خلاف ملٹری ٹرائل مکمل ہو گیا تھا، ملزم کا ملک سے غداری اور اہم راز دیگر ملکوں کو دینے کے الزام میں ملٹری ٹرائل کیا گیا تھا، جس کے بعد انھیں سینٹرل جیل کراچی منتقل کیا گیا۔

لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیر بلوچ کو 2016 میں گرفتار کیا گیا تھا، جس کے بعد انھیں آرمی ایکٹ کے تحت فوج کی تحویل میں دیا گیا، جیل حکام کے مطابق عزیر بلوچ کے خلاف ارشد پپو قتل کیس سمیت 54 سے زائد مقدمات درج ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں