The news is by your side.

Advertisement

کراچی : فیکٹری میں زہریلی گیس 4 افراد کی ہلاکت ، پولیس نے ابتدائی رپورٹ تیار کرلی

کراچی : پولیس نے شاہ لطیف ٹاؤن میں کپڑا بنانے والی فیکٹری میں زہریلی گیس سے چارافراد کی ہلاکت سے متعلق عینی شاہدین کے بیان اور فیکٹری سے شواہد حاصل کرکے ابتدائی رپورٹ تیارکرلی۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے شاہ لطیف میں کپڑا بنانے والی فیکٹری میں زہریلی گیس سے 4 مزدوروں کے جاں بحق ہونے کے واقعے کے بعد فیکٹری کا ٹینک مکمل سیل کردیا ہے۔

پولیس نے واقعے کی ابتدائی رپورٹ تیار کرلی ہے ، حکام کا کہنا ہے کہ جائے وقوعہ کا معائنہ کرنے کیلئے سپارکو کو خط لکھ دیا گیا، جس میں کہا گیا ہے کہ
تحقیقات کریں کہ کونسی گیس تھی، جس سے اموات ہوئی، سپارکو کی تحقیقات کے بعد ذمہ داروں کیخلاف کارروائی ہوگی۔

چاروں لاشوں کوپوسٹ مارٹم کے بعد لواحقین کے حوالے کردیا گیا ہے ، مرنے والوں میں شفٹ انچارج شہریار،پلانٹ انچارج عمران ، اسسٹنٹ فلٹر غلام حسین اور ہیلپر شیراز شامل ہیں۔

وزیرمحنت سندھ سعید غنی نے متعلقہ حکام کوہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ واقعے کےذمہ داروں کیخلاف کارروائی کی جائے۔

ایم پی اے ساجد جوکھیو نے جناح اسپتال پہنچ کرلواحقین سےملاقات کی اور بتایا واقعے کی سیکریٹری لیبرڈیپارٹمنٹ تحقیقات کریں گے، فیکٹری کیمیکل کی تھی، ملازمین کو حفاظتی اقدامات کے بغیر بوائلرمیں اتارا گیا۔

ساجد جوکھیو کا کہنا تھا کہ چاروں لوگ تیزاب سےجھلس کرجاں بحق ہوئے،فیکٹری انتظامیہ نے نالائقی کا مظاہرہ کیا۔

دوسری جانب فیکٹری انتظامیہ نے میڈیا نمائندوں کو فیکٹری میں داخل ہونے اورکسی قسم کی معلومات دینےسے انکارکردیا، واقعے میں جاں بحق منیجر کے ورثا نے الزام لگایا کہ ورکرز کو زبردستی تیزاب کا ٹینک صاف کرنے کیلئے اتارا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں