The news is by your side.

Advertisement

گھوٹکی الیکشن میں مخالف امیدوار کی حمایت، پی پی کے ایم پی اے سے استعفیٰ لینے کا فیصلہ

سکھر: گھوٹکی ضمنی الیکشن میں پی پی امیدوار کی کام یابی کے بعد اہم فیصلے کیے گئے ہیں، بلاول بھٹو زرداری نے پی پی کے ایم پی اے سردار علی نواز مہر سے استعفیٰ لینے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی نے گھوٹکی ضمنی انتخابات کے بعد پارٹی کی مقامی سطح پر اہم فیصلے کیے ہیں، صوبائی اسمبلی کے رکن سردار علی نواز مہر سے استعفیٰ لیا جائے گا۔

پی پی چیئرمین بلاول بھٹو نے پارٹی رہنماؤں کو احکامات جاری کر دیے، ایم پی اے نے ضمنی الیکشن میں مخالف امیدوار کی حمایت کی تھی۔

ڈسٹرکٹ کونسل گھوٹکی کے چیئرمین حاجی خان مہر سے بھی استعفیٰ لینے کا فیصلہ کیا گیا ہے، ڈی سی چیئرمین نے بھی پیپلز پارٹی کے مخالفت امیدوار کو سپورٹ کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  گھوٹکی: این اے 205 ضمنی انتخاب، سردار محمد بخش مہر نے میدان مار لیا

تاہم استعفوں کے بعد خالی ہونے والی نشستوں سے متعلق ابھی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ سردار علی نواز خان عرف راجہ خان مہر پی ایس 21 گھوٹکی سے صوبائی اسمبلی کے لیے منتخب ہوئے تھے۔

علی نواز خان نے سوشل میڈیا پر عل الاعلان اپنے ان دوستوں اور گھوٹکی کے عوام کا شکریہ ادا کیا ہے جنھوں نے پی پی کے مخالف آزاد امیدوار کو ووٹ دیا، ان کا کہنا تھا کہ ہار جیت مقدر سے ہوتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں