The news is by your side.

Advertisement

کنٹرول لائن پر بھارتی بمباری کی مذمت کرتا ہوں: صدر مملکت

مظفرآباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کنٹرول لائن پر بھارتی بمباری اور مقبوضہ کشمیر میں مظالم پر بھارت کی مذمت کر دی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق مظفر آباد میں صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا میں بھارت میں مسلمانوں پر تشدد، کنٹرول لائن پر بھارتی فوج کی بمباری اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی مذمت کرتا ہوں۔

صدرمملکت نے کہا کشمیری اپنے آپ کو اکیلا نہ سمجیں، پاکستان کشمیر کے ساتھ کھڑا ہے اور رہے گا، اقوام متحدہ بھارتی مظالم کا نوٹس لے، آزادی کی جدوجہد میں کشمیریوں نے بہت قربانیاں دی ہیں۔

ڈاکٹر عارف علوی کا کہنا تھا آزاد کشمیر حکومت نے کرونا کی وبا سے نمٹنے کے لیے اچھے اقدامات کیے، رمضان کے حوالے سے حکومت کی علما کے ساتھ مشاورت ہوئی، اس مشاورتی عمل میں آزاد کشمیر کی قیادت بھی شامل تھی، رمضان المبارک مسلمانوں کے لیے خصوصی اہمیت کا حامل مہینہ ہے، ایمان، اتحاد، تنظیم کے اصول پر عمل کر کے ہی عظیم قوم بنا جا سکتا ہے۔

ایل او سی پر اشتعال انگیزی، پاکستان کا بھارت کے خلاف شدید احتجاج

انھوں نے کہا کہ دنیا کے مختلف شہروں میں لاک ڈاؤن کی نوعیت مختلف ہے، کرونا وائرس پر قابو پانے کے لیے احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد ضروری ہے۔ قبل ازیں، صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی مظفرآباد پہنچے تو ہیلی پیڈ پر صدر ریاست سردار مسعود خان اور وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ محمد فاروق حیدر نے ان کا استقبال کیا، عارف علوی نے ایوان وزیر اعظم میں کرونا وائرس کے حوالے سے دی جانے والی بریفنگ میں شرکت کی۔

واضح رہے کہ بھارتی فورسز کی جانب سے لائن آف کنٹرول پر سیز فائر کی مسلسل خلاف ورزی جاری ہے، 14 اپریل کو بھی ایل او سی پر بھارتی فوج کی جانب سے بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 47 سالہ شہری عالم دین شدید زخی ہو گیا تھا جس پر پاکستان نے بھارتی سینئر سفارت کار کو دفتر خارجہ طلب کر کے احتجاج کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں