The news is by your side.

صدر سپریم کورٹ بار نے اے آروائی کے ہیڈ آف نیوز عماد یوسف پر درج مقدمے کی دفعات کو حیران کن قرار دے دیا

اسلام آباد : سپریم کورٹ بار کے صدر عابد زبیری نےاے آروائی کے ہیڈ آف نیوزعماد یوسف پردرج مقدمےکی دفعات حیران کن قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ بار کے صدر عابد زبیری نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں گفتگو کرتے ہوئے اے آروائی کے ہیڈ آف نیوزعماد یوسف پر درج مقدمے کی دفعات حیران کن قرار دیتے ہوئے کہا کہ کسی کی رائے پر چینل کا کیا قصورہے۔

عابد زبیری کا کہنا تھا کہ ایسی دفعات تو ریاست کے خلاف جنگ کرنے پر لگتی ہیں جو بہت ہی حیران کن ہیں۔

سپریم کورٹ بار کے صدر نے روز دیا کہ آزادی صحافت کے معاملے کومدنظررکھتےہوئے ان دفعات کودیکھناہوگا، کہیں یہ دفعات آزادی صحافت کے اصولوں سے متصادم تو نہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ عماد یوسف کے وکیل کو چاہیے کہ یہ چارج ابتدائی مرحلے میں ختم کروائیں۔

یاد رہے اسلام آبادکےڈسٹرکٹ اینڈسیشن کورٹ میں جج طاہرعباس سِپرا نے اداروں کیخلاف بغاوت پر اکسانے کے مقدمےکی سماعت کی تھی۔

جس میں دلائل کے بعد شہبازگل کے ساتھ اے آر وائی نیوز کے ہیڈ آف نیوز عماد یوسف پر فردِ جرم کی کارروائی موخر کردی تھی اور فرد جرم عائد کرنے کی نئی تاریخ دو فروری مقرر کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں