The news is by your side.

Advertisement

وزیر اعظم ہاؤس کی روشنیاں بجھا دی گئیں

اسلام آباد: پاکستان میں ارتھ آور شروع ہو گیا، وزیر اعظم ہاؤس سمیت ملک کے مختلف مقامات پر اضافی لائٹس بند کر دی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق آج دنیا بھر میں ارتھ آور منایا جا رہا ہے، پاکستان میں بھی ایک گھنٹے کے لیے اضافی روشنیاں بند کر دی گئی ہیں۔

ارتھ آور کی مناسبت سے لائٹس ساڑھے 8 سے ساڑھے 9 بجے تک بند رہیں گی، وزیر اعظم کی ہدایت پر پرائم منسٹر ہاؤس کی لائٹس بھی ایک گھنٹے کے لیے بجھا دی گئیں۔

تاہم ارتھ آور کے دوران سیکیورٹی نکتہ نظر سے ملک کے مختلف مقامات پر اہم لائٹس جلتی رہیں گی۔

وزیر اعظم عمران خان نے آج اپنے پیغام میں کہا تھا کہ ماحولیاتی بہتری موجودہ حکومت کی اوّلین ترجیحات میں شامل ہے، انھوں نے قوم سے اپیل کی کہ صاف اور آلودگی سے پاک ماحول کے لیے حکومت کا بھرپور ساتھ دیں۔

دنیا بھر میں آج شب روشنیاں کیوں بجھائی جا رہی ہیں؟

واضح رہے کہ زمین کو ماحولیاتی خطرات سے بچانے اور اس پر توانائی کے بے تحاشا بوجھ کو کم کرنے کے لیے آج دنیا بھر میں ارتھ آور منایا جا رہا ہے، ارتھ آور پہلی بار 2007 میں سڈنی کے اوپیرا ہاؤس کی روشنیوں کو بجھا کر منایا گیا تھا، جس میں ایک کروڑ سے زائد شہریوں نے شرکت کر کے عالمی سطح پر ماحولیاتی تبدیلی کے حوالے سے متحد ہونے کا پیغام دیا تھا۔

ارتھ آور کا مقصد ماحولیاتی تبدیلی (کلائمٹ چینج) کے حوالے سے عوامی شعور اجاگر کرنا ہے، کیوں کہ دنیا بھر میں ماحولیاتی تبدیلیوں کے نتیجے میں کرّہ ارض کا درجہ حرارت بڑھ رہا ہے جس کے سبب ماحول پر منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں