The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم عمران خان کی ڈاکٹر ظفر مرزا کی سرزنش

اسلام آباد: عدالت میں غیرسنجیدہ رویہ اختیار کرنے پر وزیراعظم عمران خان نے ڈاکٹر ظفر مرزا کی سرزنش کردی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی جانب سے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا کی سرزنش کی گئی ہے، ظفر مرزا نے عدالت میں غیرسنجیدہ رویہ اختیار کیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نے عدالت میں حکومتی کاوشوں کو مناسب پیش نہ کرنے کا نوٹس لیا ہے، ظفر مرزا کا فرض تھا اعلیٰ عدلیہ کے سامنے حکومتی کاوشوں کو جامع پیش کرتے۔

ذرائع کے مطابق ظفر مرزا عدالت کے سوالات کا تسلی بخش جواب دینے میں ناکام رہے، گزشتہ روز کابینہ اجلاس میں وزیراعظم نے ظفر مرزا پر ناراضی کا اظہار کیا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ حکومت عدلیہ اور ججز کو نہایت عزت و تکریم کی نگاہ سے دیکھتی ہے، عدلیہ کے سامنے غیرسنجیدہ یا غیرذمہ دارانہ رویہ برداشت نہیں کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ دو روز قبل چیف جسٹس گلزاراحمد نے کرونا وائرس کے معاملے پر حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے معاون خصوصی ڈاکٹر ظفر مرزا کو ہٹانے کا کہہ دیا تھا۔

حکومتی وکیل کا کہنا تھا کہ ظفر مرزا کو اس موقع پر ہٹانا مناسب نہیں ہوگا، کرونا وائرس کے پیش نظر ظفر مرزا اچھا کام کررہے ہیں ان کو ہٹا کر کسی اور لگایا گیا تو نقصان پہنچ سکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں