The news is by your side.

Advertisement

‏’ترقی پذیر ممالک کیلئے رعایتیں اور گرانٹس کے وعدے پورے کیے جائیں‘‏

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ غریب ملکوں کےلیےاضافی ذخائر درکار مالیاتی ریلیف سے ‏بہت کم ہیں ترقی پذیرممالک کیلئے رعایتیں اورمالی گرانٹس کے وعدے پورے کیے جائیں۔

اقوام متحدہ کےاعلیٰ سطح سیاسی فورم سےخطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ‏دنیا کو کورونا وبا اور ماحولیاتی تبدیلی جیسےچیلنجز کاسامنا ہے اسمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی ‏مؤثر اور کامیاب رہی اب ہماری تمام تر کوششیں کورونا ویکسین مہم تیز کرنے پر ہیں کوروناویکسین ‏کی تیاری اور تقسیم کاعمل تیزبنانا ہو گا۔

وزیراعظم نے کہا کہ ویکسین کیلئےترقی پذیرممالک کوگرانٹس اوررعایتیں بھی دینا ہوں گی ترقی ‏پذیرممالک کیلئے رعایتیں اورمالی گرانٹس کےوعدےپورےکیےجائیں امیرملکوں نےمعیشت متحرک ‏کرنےکیلئے17ٹریلین ڈالر خرچ کیے بدقسمتی سےان ممالک کی رسائی مطلوبہ ہدف کے5فیصدتک ہو ‏سکی۔

وزیراعظم نے کہا کہ ترقی پذیرممالک کےلیےقرضوں کی ازسرنواسٹرکچرنگ بھی ضروری ہے چیلنجز ‏سے نمٹنے کیلئے ترقی پذیرممالک کی امداد کو مؤثر بنانا ہو گا آئی ایم ایف اسپیشل ڈرائنگ رائٹس ‏کاقیام عمل میں لانے کی تجویزدے چکےہیں غریب ملکوں کےلیےاضافی ذخائردرکارمالیاتی ریلیف ‏سےبہت کم ہیں توقع ہےترقی پذیرملکوں کے لیے کم ازکم150ارب ڈالررکھےجائیں گے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ترقی پذیرملکوں کوچیلنجزسےنمٹنےکےقابل بنانےپرتوجہ مرکوز کرنا ہو گی ‏موسمیاتی چیلنجزسےنمٹنےکیلئےترقی پذیرملکوں کوسالانہ180ملین ڈالرز درکار ہوں گے کورونا ‏صورتحال سے92فیصد پائیدار ترقیاتی اہداف متاثر ہوئےہیں پائیدار انفرا اسٹرکچرمیں سرمایہ کاری سے ‏متعلق مذاکرات ہونےچاہئیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ ٹیکس چوری روکنےسےمتعلق کم سےکم عالمی کارپوریٹ ٹیکس کی امریکی ‏تجویز کا خیرمقدم کرتے ہیں کوروناکی وبانےایک بارپھراقوام متحدہ کےایک دوسرےپرقریبی انحصار ‏کومنکشف کیاہے ہمیں تنازعات کے پرامن اورمنصفانہ حل پرتوجہ دیناہوگی ہمیں زیادہ مساوی، ‏مستحکم اور خوشحال دنیاکی تعمیر کیلئےعالمی تعاون کو فروغ دینا ہو گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں