site
stats
اہم ترین

احتجاج کے ذریعے حکومت گرانے والوں کے دن پورے ہوگیے، ایاز صادق

لاہور : اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق کا کہنا ہے کہ احتجاج سب کا حق ہے مگر اس کے ذریعے حکومت گرانے والوں کے دن گنے جاچکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکر قومی اسمبلی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’ٹی او آراز کا فیصلہ سڑکوں پر حل نہیں ہوسکتا، حکومت اور اپوزیشن کی تمام جماعتیں ٹی او آرز پر ایک اور نشست کے لیے خواہش مند ہیں‘‘۔

ایاز صادق کا مزید کہنا تھا کہ ’’میری کوشش ہے کہ ٹی او آرز کے معاملے پر حکومت اور اپوزیشن مٹینگ میں بیٹھ جائے، حکومت ٹی او آرز پر مٹینگ کرنا چاہتی ہے اس ضمن میں گزشتہ رات اعتزاز احسن اور شیری مزاری کو آگاہ کردیا ہے تاہم شاہ محمود قریشی سے رابطہ ہوا تو علم میں آیا کہ وہ ملک سے باہر ہیں‘‘۔

پڑھیں :     پانامہ پیپرز: ٹی او آرز کمیٹی، ڈیڈ لاک برقرار

اسپیکر اسمبلی نے کہا کہ ’’مجھے جمہوریت کے خلاف کوئی سازش ہوتی نظر نہیں آرہی، تحریک انصاف کے اراکین جمہوریت پسند لوگ ہیں وہ اسمبلی سے استعفیٰ نہیں دیں گے‘‘۔

سندھ کابینہ میں ہونے والی تبدیلیوں پر گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’’سندھ میں تبدیلی پیپلزپارٹی کی مشاورت سے کی گئی ہے، اس تبدیلی سے صوبے میں بہتری آتی ہے تو یہ ملک کی بہتری ہے‘‘۔

مزید پڑھیں : وزیر اعظم کے لیے بہتر ہے اپوزیشن کے ٹی او آرز تسلیم کرلیں، خورشید شاہ

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ’’پانامالیکس کے معاملے پر کسی فریق کی حمایت میں نہیں ہوں تاہم حکومت اور اپوزیشن کے ڈیڈ لاک کو ختم کروانے کے لیے کردار ادا کررہا ہوں، انہوں نے کہا کہ ’’مسلم لیگ میں کوئی فاروڈ بلاک نہیں ہے مجھے اسمبلی میں کوئی فاروڈ بلاک نظر نہیں آرہا‘‘۔

یاد رہے پاناما لیکس کے معاملے پر ٹی او آرز کے حوالے سے حکومت اور اپوزیشن کےدرمیان ڈیڈ لاک تاحال جاری ہے، حکومتی کمیٹی نے ٹی او آرز میں وزیر اعظم میاں محمد نوازشریف کا نام شامل کرنے مطالبہ کیا ہے اور وہ اس سے کسی صورت دستبردار ہونے کو تیار نہیں ہیں جبکہ حکومتی وزراء کا مؤقف ہے کہ پانامالیکس میں وزیراعظم کا نام موجود نہیں لہذا ٹی او آرز میں اُن کا نام شامل نہیں کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں : کوئی ابہام نہ رہے، وزیراعظم کا نام ٹی او آرز میں شامل کرائیں گے، بلاول زرداری

دوسری جانب اپوزیشن کی سب سے بڑی جماعت پیپلزپارٹی کے چیئرمین نے حکومت کو ٹی او آرز کے معاملے پر آڑے ہاتھوں لیا ہوا ہے اور انہوں نے اپنی پارٹی اراکین قومی اسمبلی کو ہدایت کی ہے کہ ’’حکمراں جماعت کو کسی صورت ریلیف فراہم نہ کیا جائے جبکہ اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے بھی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ’’حکومت کو اپوزیشن کے ٹی او آرز ہر صورت تسلیم کرنے ہوں گے‘‘۔

اسے بھی پڑھیں : عمران خان کا 7ا گست سے تحریک چلانے کااعلان

تحریک انصاف کی جانب سے بھی اگست میں کرپشن کے خلاف تحریک چلانے کا اعلان کیا گیا ہے ، اس ضمن میں چیئرمین تحریک انصاف نے پارٹی رہنماؤں کو دھرنے کی تیاری کی ہدایت کردی ہے‘‘۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top