The news is by your side.

سلطانز کی شکست، قلندرز کی پی ایس ایل میں‌ پہلی کامیابی

دبئی: پاکستان سپر لیگ کے بیسویں میچ میں لاہور قلندرز کے نوجوان باؤلر شاہین آفریدی کی شاندار باؤلنگ اور کپتان برینڈن میکولم ذمہ دارانہ بیٹنگ نے اپنی ٹیم کو پہلی فتح سے ہمکنار کرایا۔ 

تفصیلات کے مطابق پاکستان سپر لیگ کا بیسواں میچ ملتان سلطانز اور لاہور قلندرز کے مابین دبئی کے انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلا گیا، سلطانز کی قیادت شعیب ملک جبکہ قلندرز کی کپتانی برینڈن میکولم نے کی۔

شعیب ملک ٹاس جیت کر سلطانز نے پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا، احمد شہزاد اور کمار سنگاکارا اوپنگ کے لیے میدان میں آئے، 61 کے مجموعی اسکور پر ملتان کی ٹیم کو پہلے نقصان کا سامنا کرنا پڑا بعد ازاں 92، 97، 99، 99، 99، 108، 111، 114 اور 114 کے مجموعی اسکور پر وکٹیں گریں۔

مصباح الیون کے آخری 7 کھلاڑی مجموعی اسکور میں صرف 17 رنز کا اضافہ کرسکے، کمار سنگاکارا 45 اور احمد شہزاد 32 کے ساتھ نمایاں بلے باز رہے جبکہ نوجوان باؤلر شاہین آفریدی نے 3.4 اوورز میں 4 رنز دے کر پانچ وکٹیں حاصل کیں، سلطانز کی ٹیم مقررہ 20 اوورز سے پہلے ہی 114 پر ڈھیر ہوگئی۔

ہدف 115 کے تعاقب میں لاہور قلندرز کی جانب سے بیٹنگ کا آغاز فخر زمان اور ڈیوچ نے کیا، میکولم الیون کی پہلی وکٹ 33 رنز پر گری جبکہ دوسری اور تیسری 41 پر گری، نئے آنے والے بیٹسمین گلریز اور کپتان نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور ٹیم 53 رنز کی شراکت داری قائم کی جس نے ٹیم کو فتح دلوانے میں اہم کردار ادا کیا۔

قلندرز کے چوتھے کھلاڑی گلریز صدف سولہویں اوور میں 27 رنز کی اننگز کھیل کر پویلین لوٹے، نئے آنے والے بیٹسمین سہیل اختر نے برینڈن میکولم کا ساتھ دیا اور انیسویں اوور میں چار وکٹوں کے نقصان پر ہدف حاصل کرلیا، کپتان میکولم 35 رنز کے ساتھ نمایاں بلے باز رہے جبکہ محمد عرفان، شعیب ملک، عمران طاہر اور سیف بدر نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

شاہین شنواری کو عمدہ باؤلنگ کی وجہ سے مین آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا۔


قلندرز اننگز خلاصہ

لاہور کے کپتان برینڈن میکولم نے 31 رنز کی ذمہ دارانہ اور ناقابل شکست اننگز کھیلی جس کے باعث ٹیم کو ایونٹ میں پہلی فتح حاصل ہوئی۔

قلنرز کے کپتان اور بلے باز گلریز نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 15 اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 90 تک پہنچایا۔

ہدف کے تعاقب میں لاہور قلندرز کی جانب سے بیٹنگ کا آغاز فخر زمان اور ڈیوچ نے کیا، تیسرے ، چوتھے اور پانچویں اوور میں قلندرز کو ابتدائی تین اہم وکٹوں کے نقصان کا سامنا کرنا پڑا، 5 اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 3 وکٹوں کے نقصان پر 41 تک پہنچا۔

ملتان سلطانز اننگز خلاصہ

شاہین آفریدی نے اننگز کا کامیاب ترین سولہواں اوور کروایا اور اس میں ملتان سلطانز کے تین کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی، نوجوان باؤلر نے شعیب ملک، روس وائٹ لے اور سیف بدر کو پویلین کی راہ دکھائی، بعد ازاں اٹھارویں اوور میں سہیل تنویر بھی آفریدی کا شکار بنے، مقررہ 20 اوورز میں سلطانز کی ٹیم 114 رنز پر ڈھیر ہوئی۔

تیرہویں اوور کی آخری بال پر احمد شہزاد آؤٹ ہوئے بعد ازاں پندرہویں اوور میں صہیب مقصود بھی آؤٹ ہوئے، اوور اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 3 وکٹوں کے نقصان پر 97 تک پہنچا۔

نویں اوور کی پہلی گیند پر کمار سنگاکارا سنیل نارائن کی کمار سنگاکارا کو پویلین کی راہ دکھائی انہوں نے 30 گیندوں پر 45 رنز بنائے، دسویں اوور کے اختتام پر ٹیم کو مجموعی اسکور ایک وکٹ کے نقصان پر 73 تک پہنچا۔

سلطانز کی جانب سے اننگز کا آغاز احمد شہزاد اور کمار سنگاکار نے کیا، 5 اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور بغیر کسی نقصان کے 41 تک پہنچا۔

لاہور قلندرز کے لیے میچ بہت اہم ہے کیونکہ فتح کی صورت میں ٹیم کوالیفائنگ راؤنڈ تک رسائی حاصل کرسکے گی علاوہ ازیں شکست کی صورت میں ایونٹ سے باہر جانا ہوگا، قبل ازیں ملتان سلطانز لاہور قلندرز کے خلاف فتح حاصل کرچکی ہے۔

لاہور ایونٹ میں اب تک تمام میچز ہار چکا ہے اور پوائنٹس ٹیبل پر لاہور کا آخری نمبر ہے جبکہ ملتان سلطانز 7 میچز میں 4 فتوحات حاصل کر کے 9 پوائنٹس کے ساتھ فہرست میں پہلے نمبر پر ہے۔


ملتان سلطانز

پہلی بار پی ایس ایل میں شامل ہونے والی ٹیم ملتان سلطانز کے کپتان شعیب ملک ہیں جبکہ دیگر کھلاڑیوں میں احمد شہزاد، کیرون پولارڈ، کمار سنگا کارا، صہیب مقصود اور ڈیرن براوو، ورلڈ کلاس اسپنر عمران طاہر ، پاکستانی فاسٹ بولرز محمد عباس، عمرگل، محمد عرفان، جنید خان اور سہیل تنویر شامل ہیں۔


لاہور قلندرز

لاہور قلندر کی قیادت برینڈن میکول کر رہے ہیں۔ ان کے علاوہ ٹیم میں عمر اکمل اور فخر زمان، نیوزی لینڈ کے اینٹن ڈیوسچ، بولر سہیل خان، یاسر شاہ ، شاہین آفریدی، رضا حسن، سنیل نارائن، بلاول بھٹی، غلام مدثر، بلال آصف، عامر یامین اور کیمرون ڈلپورٹ شامل ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں