The news is by your side.

Advertisement

ماہر نفسیات باپ نے اکلوتی بیٹی قتل کرکے خود کشی کرلی

ملتان : باپ نے اپنی اکلوتی بیٹی کو موت کے گھاٹ اتار کر اپنی زندگی کا بھی خاتمہ کرلیا، مقتولہ تین بچوں کی ماں تھی، ماہر نفسیات نے بیٹی کو فائرنگ کرکے قتل کیا پھر خود کو گولی مارلی۔

پنجاب کے شہر ملتان میں باپ نے بیٹی کو قتل کرنے کے بعد خود کشی کرلی، اس حوالے سے پولیس کا کہنا ہے کہ ماہر نفسیات ڈاکٹر اظہر حسین نے گھریلو تنازع پر بیٹی کو قتل کیا، مزید شواہد کیلئے فرانزک ٹیمیں جائے وقوعہ  پر پہنچ گئیں۔

ماہر نفسیات کے ڈپریشن کا شکار ہونے کا افسوسناک واقعہ اولیا کرام کے شہر  ملتان میں پیش آیا ہے جہاں ایک ڈاکٹر نے اپنی اکلوتی بیٹی کو قتل کرنے کے بعد خود کشی کرلی۔

ماہرین نفسیات کا کام  لوگوں کی ان کی ذہنی پریشانیوں اور  مشکلات سے نکالنا ہوتا ہے  لیکن اگر کوئی ڈاکٹر خود ہی ان مسائل کا شکار ہوجائے تو اس کی کاؤنسلنگ کون کرے؟

پولیس کے مطابق جسٹس حمید کالونی میں گھریلو جھگڑے پر ماہر نفسیات ڈاکٹر اظہر  حسین نے اپنی بیٹی ڈاکٹر علیزہ حیدر کو گولی مار کر قتل کردیا اس کے بعد انہوں نے گولی مار کر اپنے ہی ہاتھوں اپنی زندگی کا بھی خاتمہ کرلیا۔

واقعے کے بعد پولیس اور فرانزک ٹیموں نے موقع پر پہنچ کر قانونی کارروائی شروع کردی ہے جبکہ باپ بیٹی کی نعشوں کو مزید کارروائی کیلئے نشتر اسپتال منتقل کردیا گیا ہے، پولیس کا کہنا ہے کہ مقتولہ ڈاکٹر علیزہ حیدر تین بچوں کی ماں تھی۔

دوسروں کو خود کشی سے روکنے کی ترغیب دینے والا ماہر نفسیات اتنا بڑا قدم اٹھانے پر مجبور کیوں ہوا؟ پولیس اس حوالے سے مزید تحقیقات کررہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں