پاکستان سے کرپشن کا خاتمہ نواز شریف کے احتساب سے مشروط ہے، عمران خان -
The news is by your side.

Advertisement

پاکستان سے کرپشن کا خاتمہ نواز شریف کے احتساب سے مشروط ہے، عمران خان

آزاد کشمیر :پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان سے کرپشن کا خاتمہ نواز شریف کے احتساب سے مشروط ہے، جس ملک کا سربراہ کرپٹ ہوں اس ملک کا کوئی مستقبل نہیں ہوسکتا۔

پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کا باغ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وعدہ کرتا ہوں آپ کے ساتھ کھڑا ہوں اور آپ کو اختیارات دلاؤں گا، مغرب میں مؤثر بلدیاتی ںظام ہے، اس لئے وہاں کا نظام بہتر ہے۔

انھوں نے کہا کہ پاکستانی نوازشریف کی بادشاہت نہیں جمہوریت چاہتے ہیں، ترکی میں نوازشریف وزیراعظم ہوتے تو مارشل لا کامیاب ہوجاتا، باغ میں ماحول گرماتے ہوئے کپتان نے کہا نوازشریف خود کو احتساب سے بالاتر نہ سمجھیں، حساب نہ دیا تو سڑکوں پرنکلیں گے، ایسا احتجاج کریں گے جوپہلے کبھی نہیں ہوا۔

عمران خان نے کہا کہ بیرسٹر سلظان محمود وزیراعظم بنے تو احتساب کا عمل شروع ہوگا، سب سے پہلے میں اپنے آپ کو احتساب کیلئے پیش کروں گا۔

نواز شریف پر تنقید کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ جس ملک کا سربراہ کرپٹ ہوں اس ملک کا کوئی مستقبل نہیں ہوسکتا، پیسہ اس لئے باہر سے نہیں آیا کیونکہ چور چور کا احتساب نہیں کرتا، نواز شریف کے احتساب تک کرپشن کا خاتمہ ممکن نہیں، آپ یہ نہ سمجھیں کہ پی ٹی آئی کے آتے ہی کرپشن ختم ہوجائے گی۔

انھوں نے کہا کہ اسحاق ڈار دو سال سے وہی بات کر رہے جو دستاویزی فلم میں کہی، اسحاق ڈار نے خود اعتراف کیا کہ نواز شریف کا پیسہ ہاں سے باہر بھیجا، احتساب کا عمل اوپر سے شروع ہوتا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ نیب 16 سالوں سے چھوٹے لوگوں کو پکڑتی آرہی ہے، نیب وزیر اعظم کے 13 کیسز کیوں نہیں سنتی، نواز شریف نے کہا تھا کہ آصف زرداری کا پیسہ واپس لاؤں گا، ایسا ہوا۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ شہباز شریف نے آصف زرداری کا پیٹ چیر کر پیسے نکالنے کے دعوے کئے جو دھرے کے دھرے رہ گئے کیونکہ یہ لوگ خود بہت بڑے کرپٹ ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں