The news is by your side.

تحریک انصاف نے استعفوں کی منظوری کیخلاف اپیل سپریم کورٹ سے واپس لے لی

اسلام آباد : تحریک انصاف نے استعفوں کی منظوری کیخلاف اپیل سپریم کورٹ سے واپس لے لی، پی ٹی آئی نے درخواست میں اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم کرنے کی استدعا کی تھی۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف نے استعفوں کی منظوری کیخلاف اپیل سپریم کورٹ سے واپس لے لی ، پی ٹی آئی نے دائر درخواست ایڈووکیٹ آن ریکارڈ آفس سے واپس لی۔

اس سے قبل پی ٹی آئی کے مرحلہ وار استعفوں کی منظوری سپریم کورٹ میں چیلنج کیا گیا تھا، تحریک انصاف رہنما اسد عمر نے اسلام آباد ہائی کورٹ کا فیصلہ چیلنج کیا۔

تحریک انصاف کی جانب سے اپیل ایڈووکیٹ فیصل چوہدری نے دائر کی تھی ، جس میں سپریم کورٹ سے اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم کرنے کی استدعا کی گئی۔

درخواست میں اسپیکر راجہ پرویز اشرف کی جانب سے مرحلہ وار استعفوں کی منظوری کو غیرآئینی قرار دینے کی استدعا بھی کی گئی تھی۔

درخواست میں کہا گیا تھا کہ تحریک انصاف نے عوام سے تازہ مینڈیٹ کیلئے قومی اسمبلی سے مستعفی ہونےکا فیصلہ کیا، تحریک انصاف کے ارکان قومی اسمبلی سے استعفےدے چکے ہیں۔

پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ سابق ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری نے اسمبلی فلورپر 125 ارکان کےاستعفےمنظوری کئے، اسپیکر راجہ پرویز اشرف مرحلہ استعفوں کی منظوری طے کردہ اصولوں کی خلاف ورزی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں