The news is by your side.

پنجاب اسمبلی کی تحلیل : ن لیگ کا ‘دیکھو اور انتظار کرو کی پالیسی’ اپنانے کا فیصلہ

اسلام آباد : مسلم لیگ ن میں پنجاب کی سیاست میں دیکھو اور انتظار کرو کی پالیسی اپنانے کا فیصلہ کرلیا ، عمران خان کے اگلے لائحہ عمل کا انتظار کیا جائے گا۔

تفصیلات کےمطابق وزیر اعظم شہباز شریف کی زیر صدارت لیگی رہنماؤں کے اجلاس کا احوال سامنے آگیا ، پارٹی رہنماؤں کے ہنگامی اجلاس میں پنجاب اسمبلی کی تحلیل روکنے کے لیےاقدامات پر غور کیا گیا۔

ذرائع نے بتایا کہ اجلاس میں ن لیگ نے دیکھو اور انتظار کرو کی پالیسی پر عمل کرنے کا فیصلہ کیا۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ عمران خان کے اگلے لائحہ عمل کا انتظار کیا جائے اور اعتماد کا ووٹ لینے کیلئے گورنر پنجاب کی طرف سے سمری نہیں بھجوائی جائے گی۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ کیخلاف ابھی وقتی طور پر تحریک عدم اعتماد بھی نہیں پیش ہوگی۔

بعد ازاں وزیراعظم کے مشیر عطاء تارڑ نے کہا تھا کہ وزیراعلیٰ سے اعتماد کا ووٹ لینے اور تحریک عدم اعتماد دائر کرنے سمیت تمام آپشنز استعمال کیے جاسکتے ہیں، چاہے اسمبلی کا اجلاس جاری ہو۔

ان کا کہنا تھا لپ آئین اور قانون کی روح کے مطابق تحریک عدم اعتماد اور اعتماد کا ووٹ اسمبلی کے اجلاس کے دوران بھی دائر کیا جا سکتا ہے، ہمارے پاس بہت سے اختیارات ہیں، اسمبلی کو بچانے کی ہر ممکن کوشش کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں