The news is by your side.

Advertisement

مسلمان بچے پر تشدد: گورنر پنجاب نے عالمی ضمیر کو جھنجھوڑ ڈالا

لاہور: گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور آئے روز سوشل میڈیا پلیٹ فارم کے زریعے بھارت کا مکروہ چہرہ دنیا کے سامنے آشکار کرتے رہتے ہیں، آج ایک بار  پھر وہ بھارت کے داغدار چہرہ دنیا کے سامنے لے آئے ہیں۔

گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور نے بھارت میں مندر میں پانی پینے والے مسلمان بچے پر ہونے والے تشدد کی ویڈیو ٹوئٹ کی ہے، ویڈیو بھارتی ریاست اترپردیش کی ہے، جہاں مندر میں پانی پینے پر مسلمان لڑکے کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

مسلمان بچےپر تشدد کی ویڈیو دیکھ کر گورنر پنجاب دل گرفتہ ہوئے اور بھارت کی تعصب پسند حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ بھارت مکمل طور پر تعصب پسند ہندوؤں کا ملک بن چکا ہے، مودی آر ایس ایس کے دہشت گردوں کی سرپرستی کر رہا ہے۔

گورنرپنجاب کا کہنا تھا کہ بھارتی سیکورٹی فورسز بھی انتہا پسندوں اور دہشت گردوں کےحمایتی ہیں آج مسلمان ہونا بھارت میں جرم بن چکا ہے۔

اپنے ٹوئٹر بیان میں گورنر پنجاب نے عالمی ضمیر کو جھنجھوڑتے ہوئے کہا کہ بھارت میں انسانی حقوق کے قتل پر عالمی ادارے خاموشی ختم کریں، اقلیتوں کیلئے بھارت دنیا کا خطر ناک ترین ملک بن چکا ہے، اقوام متحدہ کو بھارت میں اقلیتوں کے ساتھ مظالم کا نوٹس لینا چاہیے۔

واضح رہے کہ واقعے کی ویڈیو گزشتہ ہفتے سوشل میڈیا پر شیئر کی گئی جس میں ایک شخص کو مسلمان لڑکے پر تشدد کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے، انسانی حقوق کے گروپ نے بھارت میں اس نوعیت کے بڑھتے واقعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور کہا کہ ریاست اترپردیش میں حالیہ سالوں میں مسلمان سمیت دیگر اقلیتی گروپوں پرہندو انتہا پسندوں کے حملوں میں اضافہ ہوا ہے۔

دوسری جانب مسلمان لڑکے کو انصاف دلوانے کیلئے سوشل میڈیا صارفین نے بھی آواز اٹھارکھی ہے ، ’سوری آصف‘ اور ’آصف وانٹ جسٹس‘ کے ہیش ٹیگ مقبول ہورہے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں