اسحاق ڈار نے مریم اورنگزیب کو بچی کہہ دیا، اراکین کا اعتراض -
The news is by your side.

Advertisement

اسحاق ڈار نے مریم اورنگزیب کو بچی کہہ دیا، اراکین کا اعتراض

اسلام آباد : قومی اسمبلی کے اجلاس میں پہلی مرتبہ بجٹ پر بحث کا آغاز اپوزیشن لیڈر کی عدم موجودگی میں کردیا گیا، سید خورشید شاہ اپنا خطاب سرکاری ٹی وی پر نشر نہ ہونے پر ناراض ہوگئے، اپوزیشن بجٹ بحث سے واک آوٹ کرگئی، وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے مریم اورنگزیب کو بچی کہہ دیا۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی میں پارلیمانی تاریخ کا انوکھا واقعہ پیش آیا، اپوزیشن لیڈر کے بغیر ہی بجٹ پربحث کا آغاز کردیا گیا خورشید شاہ بھی ناراض دکھائی دیئے کیونکہ ان بجٹ کے دن کا خطاب سرکاری ٹی وی پر نہیں دکھایا گیاتھا روٹھے لہجے میں بولے جب تک وضاحت نہیں آتی بجٹ پر بات نہیں کریں گے۔

اس حوالے سے وزیراطلاعات ونشریات مریم اورنگزیب نے کہا کہ آپ کا خطاب سرکاری ٹی وی پر نہیں دکھایا جا سکتا،رپورٹ میں اپوزیشن لیڈر کا موقف دے دیں گے۔

اس موقع پروزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا کہ بچی کی وضاحت قبول کی جائے۔ مریم اورنگزیب کو بچی کہنے پر اراکین اسمبلی نے اعتراض کردیا۔ اسحاق ڈار نے کہا مریم ان کی بیٹی کی طرح ہے۔

اسپیکر قومی اسمبلی نے بھی خطاب دکھانے سے معذرت کرلی۔ لیکن خورشید شاہ بضد تھے کہ ان کا خطاب سرکاری ٹی پر براہ راست دکھایا جائے۔

قومی اسمبلی میں بجٹ بحث کا آغاز نہ ہوسکا اپوزیشن کی جانب سے قومی اسمبلی اجلاس سے واک آوٹ کیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں