میگھن مرکل کے طلاق یافتہ ہونے پر ملکہ برطانیہ کا شادی میں شرکت سے انکار -
The news is by your side.

Advertisement

میگھن مرکل کے طلاق یافتہ ہونے پر ملکہ برطانیہ کا شادی میں شرکت سے انکار

لندن: برطانوی ولی عہد شہزادہ چارلس اور اور ان کی سابق اہلیہ شہزادی ڈیانا کے چھوٹے بیٹے شہزادہ ہیری بہت جلد امریکی اداکارہ میگھن مرکل کے ساتھ رشتہ ازدواج میں بندھ جائیں گے، تاہم اس شادی میں ملکہ برطانیہ الزبتھ شریک نہیں ہوں گی۔

یہ بات سننے کے بعد پہلا خیال یہی ذہن میں آتا ہے کہ شاید ملکہ اپنی علالت کے باعث اس شادی میں شریک نہ ہوسکیں، لیکن ان کی عدم شرکت کی وجہ نہایت حیرت انگیز ہے جسے برطانوی میڈیا بالکل مضحکہ خیز قرار دے رہا ہے۔

وہ وجہ یہ ہے کہ چونکہ میگھن مرکل ایک طلاق یافتہ خاتون ہیں لہٰذا یہ بات صدیوں سے رائج شاہی اصول و قوانین کے خلاف ہے چنانچہ ملکہ برطانیہ شادی میں شرکت کرنے کے بجائے اسے دنیا کے باقی لوگوں کی طرح صرف ٹی وی پر دیکھیں گی۔

برطانوی بادشاہت کے اصولوں کے مطابق چونکہ ملکہ چرچ آف انگلینڈ کی سربراہ بھی ہیں جہاں انجام دی جانے والی ہر شادی کو زندگی بھر کا رشتہ سمجھا جاتا ہے، تو اس مقام پر کسی طلاق یافتہ شخص کی دوبارہ شادی کرنا اور چرچ کے بڑوں کی جانب سے اس شادی میں نیک خواہشات کا اظہار کرنا ملکہ کے لیے ایک نازک مرحلہ ہے۔

خیال رہے کہ برطانیہ کے قدامت پسند طبقے کی بعض عبادت گاہوں میں آج بھی کسی طلاق یافتہ شخص کا دوبارہ شادی کرنا ممنوع ہے۔

اس شاہی اصول کے برخلاف ملکہ برطانیہ اپنے پوتے ہیری کی شادی سے بے حد خوش ہیں اور انہوں نے جوڑے کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار بھی کیا ہے۔

یاد رہے کہ ملکہ پر یہ بندش پہلی بار نہیں ہے۔ اس سے قبل وہ اپنے بیٹے ولی عہد شہزادہ چارلس کی دوسری شادی میں بھی اسی لیے شرکت نہ کرسکیں کہ وہ طلاق یافتہ خاتون کمیلا پارکر سے رشتہ ازدواج میں بندھنے جارہے تھے۔

ملکہ نے بعد ازاں شاہی محل کے اندر جوڑے کی جانب سے دیے جانے والے ریسیپشن میں شرکت کی تھی۔

برطانوی میڈیا کے مطابق امکان یہی ہے کہ اب بھی وہ شادی کی مرکزی تقریب کے بجائے بعد میں شاہی محل میں ہونے والی تقریبات میں شرکت کریں گی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں