The news is by your side.

Advertisement

کشمیر انڈر اٹیک ہے، راجہ فاروق نے یو این فوجی مبصر میں یادداشت پیش کر دی

مظفر آباد: وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر نے اقوام متحدہ کے فوجی مبصر مشن میں یادداشت پیش کر دی۔

تفصیلات کے مطابق ارکان اسمبلی و کابینہ اور دیگر سیاسی رہنما آج اقوام متحدہ کے فوجی مبصر مشن پہنچے، جہاں انھوں نے مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے یادداشت پیش کی۔

راجہ فاروق حیدر نے کہا کہ کشمیر نہ لاک ڈاؤن، نہ انڈر سیج ہے بلکہ انڈر اٹیک ہے، اس لیے کشمیری عوام سیاسی سفارتی حمایت سے بڑھ کر عملی اقدامات چاہتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ لائن آف کنٹرول پر بسنے والے 6 لاکھ سے زائد افراد بھارت کی گولہ باری کا شکار ہیں، کشمیریوں کی مرضی کے بغیر کوئی فیصلہ قابل قبول نہیں ہوگا، سیاسی نقشہ جاری ہوا ہے لیکن کشمیر کا فیصلہ کشمیریوں کی مرضی کے بغیر نہیں ہو سکتا۔

یو این نمائندوں نے بھارت سے جبری گم شدگیوں کا حساب مانگ لیا

یاد رہے کہ آج اقوام متحدہ کے نمائندوں نے جموں و کشمیر میں بھارت کے غاصبانہ قبضے کی مذمت کرتے ہوئے عالمی برادری سے بھارتی مظالم بند کرانے کے لیے فوری ایکشن کا مطالبہ کر دیا ہے۔

بھارت کی جانب سے کشمیر کی ریاستی خود مختاری کے خاتمے کا ایک سال مکمل ہو گیا ہے، یو این نمائندگان برائے انسانی حقوق نے بھارت سے مطالبہ کیا کہ وہ بے گناہ اور معصوم کشمیریوں کو فوری طور پر رہا کرے، مقبوضہ وادی میں انٹرنیٹ پر عائد پابندیاں بھی ختم کی جائیں، اور بھارت 1989 سے کشمیر میں جاری جبری گمشدگیوں کا حساب دے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں