site
stats
پاکستان

قاتلوں کی ہلاکت پرایم کیوایم کاواویلاناقابل فہم ہے: رینجرز

کراچی: رینجرزکا کہنا ہے ہے کہ ناردرن بائی پاس پرمقابلے میں مارے جانےو الےچار دہشتگرد ایم کیوایم کےسیف ہاؤسزمیں روپوش دہشتگرد تھے۔

رینجرزترجمان نے میڈیاکوجاری بیان میں کہا کہ ایم کیوایم کی طرف سےکیا جانےوالا پروپگینڈہ کہ ایم کیوایم کےچارکارکنوں کومبینہ طورپرماورائے عدالت قتل کیا گیا، گمراہ کن اورحقائق کے منافی ہے۔

رینجرز کےترجمان کے مطابق ہلاک کئے گئے دہشتگردایم کیوایم کی لیگل ایڈکمیٹی کےرکن حسنین بخاری کےقتل میں ملوث تھے۔

ترجمان کا کہنا ہھے کہ ایم کیو ایم کی طلبہ تنظیم کے رکن وقاص شاہ کےقاتل آصف علی کوبھی اندرون سندھ روپوش کرادیاگیاتھا جسے شہداد پور سے گرفتار کیا گیا۔

ترجمان رینجرز نے کہا کہ قاتلوں کے مارے جانے پرایم کوایم کاواویلاناقابل فہم ہے۔

،ترجمان رینجرز نے واضح کیا کہ ٹارگٹڈ آپریشن آخری ٹارگٹ کلراورسہولت کاروں انکے سرپرستوں، اورمالی معاونت کرنیوالوں کےخاتمہ تک جاری رہے گا۔

واضح رہے کہ رینجرزنےکل رات سہراب گوٹھ ناردرن بائی پاس پر مقابلے میں چار مبینہ دہشت گردوں کوہلاک کیا تھا۔ترجمان رینجرز نے بتایا تھا کہ وکیل حسنین بخاری کےقتل میں ملوث  ملزمان  کی موجودگی پرسرجیکل آپریشن کیاگیا، حسنین بخاری کی چار مارچ کو ٹارگٹ کلنگ کی گئی تھی

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top