The news is by your side.

Advertisement

پٹرول بحران کا ذمہ دار کون ؟ وزیراعظم عمران خان کے سامنے رپورٹ پیش

اسلام آباد : وزارت پٹرولیم کی جانب سے رپورٹ میں 9آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کو پٹرول بحران کا ذمہ دارقرار دیا گیا ہے، وزیراعظم نے کہا پٹرول بحران کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا، اقدامات کیےجائیں کہ مستقبل میں مصنوعی بحران پیدانہ ہوں۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کو پٹرول بحران کی رپورٹ پیش کردی گئی، رپورٹ وزارت پٹرولیم کی جانب سے پیش کی گئی ، رپورٹ میں ذمہ داروں کاتعین بھی کیا گیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ رپورٹ میں ابتدائی طورپر9آئل مارکیٹنگ کمپنیاں ذمہ دارقرار دیا ہے اور کہا گیا ہے کہ 9 آئل کمپنیوں نےجان بوجھ کر پٹرول بحران پیداکیا اور ذخیرہ ہونےکےباوجودیکم جون سےپٹرول کی سپلائی محدودکی گئی۔

وزیراعظم نے کہا پٹرول بحران کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا، اقدامات کیےجائیں کہ مستقبل میں مصنوعی بحران پیدانہ ہوں اور تمام آئل کمپنیوں کوپٹرول کی فراہمی یقینی بنانے کا پابند کیا جائے اور خیرہ اندوزوں کیخلاف کارروائی کی جائے۔

یاد رہے 10 جون کو وزیراعظم نے پٹرول بحران کے ذمہ داروں کے خلاف سخت فیصلوں کی منظوری دی تھی ، جس کے بعد ایف آئی اے نے پٹرول کی ذخیرہ اندوزی میں ملوث کمپنیوں کے خلاف کاروائی کا آغاز کیا اور پٹرولیم کمپنیوں کے سربراہان سے تحقیقات کیں۔

بعد ازاں وفاقی وزیر پٹرولیم عمر ایوب نے کہا تھا کہ آئندہ 3 روز میں پٹرول کی صورت حال بہتر ہو جائےگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں