The news is by your side.

رشبھ پنت کو ایئر ایمبولینس کے ذریعے ممبئی منتقل کر دیا گیا

ممبئی: بھارتی کرکٹر رشبھ پنت کو سرجری کے لیے ایئر ایمبولینس کے ذریعے ممبئی منتقل کر دیا گیا، وکٹ کیپر کو منتقل کرنے کا فیصلہ اس لیے لیا گیا ہے کیوں کہ ڈاکٹروں نے ان کے گھٹنے کی انجری پر فوری توجہ کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق اسٹار بلے باز رشبھ پنت کو گھٹنے اور ٹخنے میں لگنے والی چوٹوں کے علاج کے لیے بدھ کی شام ڈیرادون کے ایک اسپتال سے ہوائی جہاز کے ذریعے ممبئی لے جایا گیا۔

25 سالہ کرکٹر 30 دسمبر 2022 کو ماں سے ملنے کے لیے دہلی سے اپنے آبائی شہر روڑکی جاتے ہوئے، ایک کار حادثے میں شدید زخمی ہو گئے تھے، بتایا جاتا ہے کہ رشبھ پنت کار میں اکیلے تھے اور وہیل پر سو گئے تھے، جس کی وجہ سے کار ڈیوائیڈر سے ٹکرا گئی۔

انھیں گھٹنے کے فوری آپریشن کے لیے ممبئی پہنچنے پر مضافاتی اندھیری کے کوکیلا بین دھیرو بھائی امبانی اسپتال لے جایا گیا، جہاں ڈاکٹروں نے ان کا معائنہ کیا، اور ان کی حالت بہتر قرار دی گئی۔

کوہلی اور روہت کے حوالے سے سابق بھارتی کرکٹر کا اہم بیان

بھارتی کرکٹ بورڈ نے پنت کو ایئر ایمبولینس کے ذریعے ممبئی منتقل کرنے کا فیصلہ کیا تھا کیوں کہ وہ کمرشل ایئر لائن کے ذریعے پرواز کرنے کی پوزیشن میں نہیں تھے۔

بدھ کو بی سی سی آئی نے کہا کہ رشبھ کی سرجری ہوگی، اور اس کے بعد ان کے گھٹنے کے جوڑ کے پھٹنے والے ٹشو کے کئی پروسیجر کیے جائیں گے، اور اس دوران بورڈ کی میڈیکل ٹیم علاج کی نگرانی کرے گی۔

ممبئی میں پنت معروف اسپورٹس آرتھوپیڈک سرجن دنشا پارڈی والا کی نگرانی میں ہوں گے، جو اس سے قبل سچن ٹنڈولکر، یوراج سنگھ، جسپریت بمرا اور رویندرا جدیجا کے ساتھ ساتھ دیگر کھلاڑیوں کے ساتھ بھی کام کر چکے ہیں۔

واضح رہے کہ پنت صبح سویرے ہونے والے خوف ناک کار حادثے سے زندہ بچے ہیں، حادثے کی وجہ سے ان کی کار آگ کی لپیٹ میں بھی آ گئی تھی، انھیں روڑکی کے سکشم اسپتال میں فوری علاج کے بعد ڈیرادون کے میکس اسپتال منتقل کیا گیا، جہاں ان کے چہرے اور جسم کے دیگر حصوں پر آئے ہوئے گہرے کٹ اور زخموں کی پلاسٹک سرجری ہوئی۔

اسی شام ان کے دماغ اور ریڑھ کی ہڈی کے ایم آر آئی اسکینز کے نتائج نارمل آئے، لیکن گھٹنے اور پاؤں کا اسکین درد اور سوجن کی وجہ سے ملتوی کیا گیا، جو تاحال نہیں ہو سکا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں