The news is by your side.

Advertisement

وادی کالاش: شہریوں اور سیاحوں کے لیے حکومت کا بڑا اقدام

چترال: صوبہ خیبر پختونخواہ کے ضلع چترال کے علاقے کالاش میں سڑکیں بنانے کے لیے نیشنل ہائی وے اتھارٹی کی جانب سے ٹینڈر جاری کردیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے چترال کے علاقے کالاش میں سڑکیں بنانے کے لیے ٹینڈر جاری کردیے۔ سڑکوں کی تعمیر پر 4.86 ارب روپے لاگت آئے گی۔

علاقے میں بنائی جانے والی سڑکوں کی تعمیر کا کام بروز (گاؤں) کے علاقے سے شروع کیا جائے گا جو ایون (گاؤں) کے تمام علاقوں کو آپس میں منسلک کرے گا۔

ہائی وے اتھارٹی کا کہنا ہے کہ سڑکوں کی تعمیر سے ان دشوار گزار علاقوں تک رسائی ملے گی جس سے علاقے میں سیاحت کو فروغ ملے گا۔

مزید پڑھیں: چترال میں سولہ لاکھ پودے لگانے کی مہم کا آغاز

علاوہ ازیں سڑکوں کی تعمیرات اور بعد ازاں سیاحت میں بہتری سے مقامی افراد کو روزگار بھی میسر آئے گا۔ ٹینڈر کی مزید تفصیلات اس لنک سے حاصل کی جاسکتی ہیں۔

واضح رہے کہ چترال کو قدرتی مناظر کی وجہ سے جنت نظیروادی تصور کیا جاتا ہے اور دنیا بھر سے سیاح اس علاقے کا دورہ کرنے کے لیے آتے ہیں، سڑک کی تعمیر کے بعد امکان ہے کہ سیاحوں کی بڑی تعداد یہاں کا رخ کرے گی۔

چترال اور بالخصوص وادی کلاش جانے والے سیاحوں یا مقامی افراد کو دشوار گزار راستوں کی مسافت طے کر کے وادی تک پہنچنا ہوتا ہے، پُرخطر راستوں پر کوئی نیا ڈرائیور گاڑی نہیں چلا سکتا اس لیے وہاں کے مقامی مخصوص گاڑیوں میں بیٹھا کر سیاحوں کو علاقے کی سیر کرواتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: ٹماٹر – چترال میں سماجی تبدیلی کا ذریعہ

کوہ ہندو کش پہاڑی سلسلے پر واقع حسین وادی صوبہ خیبرپختونخواہ کا حصہ ہے اور 380 کلو میٹر کا طویل راستہ افغانستان ، تاجکستا، ازبکستان، کرغستان کی سرحدوں سے ملتا ہے جس کی وجہ سے اس علاقے کو بہت اہمیت حاصل ہے۔

 


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں