The news is by your side.

Advertisement

روبوٹ مصور کے فن پارے نمائش کے لیے پیش

امریکا میں پہلی بار روبوٹ کے تیار کیے گئے فن پاروں کی نمائش کا آغاز ہوگیا جسے دیکھنے کے لیے لوگوں کی بڑی تعداد نے آرٹ گیلری کا رخ کرلیا۔

ای ڈا نامی یہ روبوٹ اپنے ہاتھ سے کینوس پر اسکیچ اور تصاویر بنانے کی صلاحیت رکھتی ہے اور اب اس کے بنائے گئے فن پاروں کی نمائش کے بعد روبوٹک تاریخ میں اسے پہلی روبوٹ آرٹسٹ کا اعزاز حاصل ہوگیا۔

یہ روبوٹ سامنے کھڑے شخص کا فوری طور پر اسکیچ بھی تیار کر سکتی ہے۔ ای ڈا کی آنکھوں میں لگے کیمرے سامنے کھڑے شخص کو اسکین کرتے ہیں جس کے بعد آرٹیفیشل انٹیلی جنس الگورتھم کی مدد سے ایک مکمل تصویر تیار ہوتی ہے۔

ای ڈا کا اے آئی (آرٹیفیشل انٹیلی جنس) برطانیہ کی آکسفورڈ یونیورسٹی نے تیار کیا ہے۔ اس کے تیار کردہ فن پاروں کو ایک آخری ٹچ انسانی ہاتھوں سے دیا جاتا ہے۔

روبوٹ آرٹسٹ کے تیار کیے گئے 8 اسکیچز، 20 پینٹنگز، 4 مجسمے و دیگر فن پارے امریکا کی برن گیلری میں نمائش کے لیے پیش کیے گئے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں