The news is by your side.

Advertisement

بجلی کے بعد اب ۔۔۔۔۔ کی بھی بندش، کیا روس فن لینڈ کے گرد گھیرا تنگ کررہا ہے؟

ماسکو: یورپی یونین میں شمولیت کے اعلان کے بعد روس اور فن لینڈ میں ٹھن گئی ہے، جہاں روس نے بجلی کے بعد گیس کی فراہمی سے انکار کردیا ہے۔

روسی کمپنی گیزپروم ایکسپورٹ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ فن لینڈ کو قدرتی گیس کی سپلائی آج سے روک دی جائے گی، اس سے قبل فن لینڈ نے سرکاری توانائی گروپ ” گیسم” کی جانب سے تصدیق کی تھی کہ روس نے فن لینڈ کو گیس کی فراہمی بند کردی ہے۔

روسی کمپنی کے بیان میں کہا گیا کہ بیس مئی کے دن کے اختتام تک معاہدے کے مطابق ادائیگی کی آخری تاریخ گزر چکی ہے اور روسی کمپنی گیس پروم ایکسپورٹ کو اپریل میں گیس کی فراہمی کے لئے گیسم سے ادائیگی موصول نہیں ہوئی جس وجہ سے یہ فیصلہ کیا گیا۔

اس سلسلے میں گیسم کو اکیس مئی سے شروع ہونے والی گیس کی سپلائی کی معطلی کے بارے میں آگاہ کیا اور جب تک ادائیگی کے صدارتی فرمان کے ذریعے قائم کردہ طریقہ کار کے مطابق روسی روبل میں نہیں ہوجاتی گیس کی مزید ترسیل نہیں کی جاسکتی۔

گیسم نے گذشتہ روز اعلان کیا تھا کہ روسی فریق نے اسے گیس کی بندش کے بارے میں آگاہ کردیا ہے کہ اگر وہ روبل میں مستقبل کی ادائیگی میں ناکام رہتا ہے تو گیس کی فراہمی جاری نہیں رکھی جاسکتی ۔

یہ بھی پڑھیں: روس کا فن لینڈ کی بجلی بند کرنے کا اعلان

تاہم فن لینڈ کی کمپنی نے مزید کہا کہ وہ گیس کی ادائیگی کے نئے نظام کو تبدیل کرنے کا ارادہ نہیں رکھتی اور مقدمہ دائر کرنے کا ارادہ کرتی ہے جبکہ گیس پروم ایکسپورٹ نے کہا کہ وہ دستیاب ذرائع سے اس مقدمے کی کارروائی میں اپنے مفادات کا دفاع کرے گی۔

واضح رہے کہ روس نے فن لینڈ کی بجلی بند کرنے کا اعلان کررکھا ہے جس کی ممکنہ وجہ فن لینڈ کی جانب سے بجلی ادائیگیوں میں مشکلات بتائی گئیں ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں