The news is by your side.

روس کا ویزہ حاصل کرنا اب اور بھی آسان، پیوٹن کا بڑا فیصلہ

ماسکو : روسی صدر ولادیمیر پوتن نے ہدایات جاری کی ہیں کہ ملک میں غیرملکیوں کے داخلے کا ایک نیا اور آسان نظام متعارف کرایا جائے جس میں وہ بغیر ویزے یہاں کا سفر کرسکیں۔

اس حوالے سے غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ صدر پوتن نے وزارت داخلہ اور خارجہ کے علاوہ فیڈرل سیکیورٹی سروس حکام کو اہم ہدایات جاری کردی ہیں۔

جس میں کہا گیا ہے کہ سیاحتی، کاروباری یا تعلیمی مقاصد کے لیے روس آنے والے غیرملکیوں کے ساتھ ساتھ کھیلوں میں حصہ لینے والے غیر ملکیوں کے لیے ویزا فری نظام متعارف کرانے کے لیے تجاویز تیار کی جائیں۔

کریملن کی جانب سے شائع کردہ ایک دستاویز میں کہا گیا ہے کہ غیرملکیوں کے روس میں داخلے لئے ویزا میں نرمی کے حوالے سے تمام اقدامات کو متعارف کرایا جانا چاہیے۔ یہ فیصلہ روسی ریاستی کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس کے بعد کیا گیا۔

ریاستی کونسل ایک مشاورتی ادارہ ہے جسے روسی صدر نے مختلف سرکاری اور عوامی اداروں کے کاموں کو بہتر کرنے کے لیے تشکیل دیا ہے۔

روسی صدر کی جانب سے دی گئی ہدایات میں ملٹی انٹری ویزوں کی میعاد میں اضافے کے ساتھ ساتھ سیاحت کے شعبے میں ضابطوں میں نرمی کرنے کی بھی تجویز دی گئی ہے۔

اس سے قبل روس کے شہر سینٹ پیٹرزبرگ میں کروز بحری جہازوں پر سفر کرنے والے سیاحوں کے منظم گروپوں کو ایک مخصوص مدت کے لیے بغیر ویزا کے روسی سرزمین پر داخل ہونے اور قیام کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔

روسی صدر نے اس طریقہ کار کو دوسرے روسی ریجنز میں بھی رائج کرنے کی تجویز دی ہے، صدر پوتن نے روسی حکام کو یہ بھی حکم دیا کہ وہ دوست ممالک کی ایئر لائنز کے ذریعے مسافروں اور کارگو پروازوں کی تعداد بڑھانے پر کام کریں۔ حکم نامے کے مطابق حکومتی تجاویز یکم جون 2023 سے پہلے پیش کی جائیں۔

واضح رہے کہ روس کی جانب سے یہ پیشرفت اس وقت سامنے آئی ہے جب یورپی یونین نے روسی شہریوں کے لیے ویزا پابندیاں سخت کردی ہیں۔

یاد رہے کہ روس یوکرین جنگ کے بعد رواں برس ستمبر میں یورپی یونین نے ماسکو کے ساتھ ویزا معاہدے کو معطل کر دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں