The news is by your side.

Advertisement

روس یوکرین جنگ کب ختم ہوگی؟ نیٹو سربراہ کی پیش گوئی

ماسکو : نارتھ اٹلانٹک ٹریٹی آرگنائزیشن (نیٹو) نے روس اور یولرئین کے درمیان جاری جنگ کے حوالے سے بیان دے کر دنیا کو تشویش میں مبتلا کردیا۔

اس حوالے سے نیٹو سربراہ ینس اسٹولٹن برگ نے دنیا کو خبردار کیا ہے کہ یوکرین میں جاری جنگ طویل المدت ہوسکتی ہے اور اگلے کئی برسوں تک جاری رہ سکتی ہے۔

جرمن میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نیٹو کے سیکریٹری جنرل ینس اسٹولٹن برگ کا کہنا تھا کہ ہمیں اس حقیقت کے لیے تیاری کرنی چاہیے کہ اس جنگ میں برسوں لگ سکتے ہیں۔

یوکرین میں جاری جنگ طویل ہو سکتی ہے، نیٹو

نارتھ اٹلانٹک ٹریٹی آرگنائزیشن (نیٹو) کے سربراہ کا یہ بیان ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب یورپی کمیشن کی جانب سے یوکرین کو یورپی یونین کے امیدوار کا درجہ دینے کی تجویز کے بعد روس نے یوکرین پر حملے تیز کردیے ہیں۔

روسی حکام بارہا یہ کہہ چکے ہیں کہ انہیں یوکرین میں امریکہ اور یورپ کی نیابت میں لڑی جانے والی جنگ کا سامنا ہے، روس پہلے ہی کہہ چکا ہے کہ نیٹو کی جانب سے یوکرین کی حمایت سے روس کے ساتھ کشیدگی کم کرنے میں کوئی مدد نہیں ملے گی۔

امریکہ اور اس کے نیٹو اتحادی جنگ یوکرین میں براہ راست مداخلت سے گریز کر رہے ہیں تاہم دنیا بھر سے جنگجو، ہتھیار اور ایندھن کی سپلائی جاری رکھے ہوئے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں