The news is by your side.

Advertisement

ثمینہ خالد کیخلاف جھوٹا مقدمہ خارج کیا جائے، سلیم مانڈوی والا

اسلام آباد : پاکستان پیپلزپارٹی کے سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے ثمینہ خالد گھرکی پر پنجاب حکومت کی جانب سے ایف آئی آر درج کرانے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پنجاب میں بادشاہت کے تمام ریکارڈز توڑے جارہے ہیں۔ مقدمہ واپس لیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے کہا ہے کہ ثمینہ خالد گھرکی کو انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ پیپلز پارٹی کے رہنماؤں پر سیاسی مقدمات قابل مذمت ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مطالبہ کیا کہ ثمینہ خالد پر درج کی گئی جھوٹی ایف آئی آر خارج کی جائے۔

سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ پنجاب کے حکمران خود سب سے بڑے قبضہ مافیا ہیں ۔سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ چوہدری سرور پنجاب میں قبضہ مافیا کی وجہ سے مستعفی ہوئے۔

مزید پڑھیں : نواز لیگ درحقیقت پانامہ پارٹی اورجھوٹوں کا ٹولہ ہے، سلیم مانڈوی والا

ان کا کہنا تھا کہ پنجاب کے عوام مغلیہ دور حکومت کو مسترد کرتے ہیں ۔ پنجاب کے ہر ضلع میں تھانے کچہری کی سیاست کی جارہی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں