The news is by your side.

اڑنے والی سوئچ ایبل گاڑی مارکیٹ میں‌ آنے کو تیار

تین منٹ میں ہوائی جہاز میں تبدیل ہونے والی گاڑی کا خیال خواب جیسا لگتا ہے، تصور کریں کہ آپ کے رش کے اوقات میں گاڑی چلا رہے ہیں، اور آپ کو الرٹ ملے کہ آگے ٹریفک جام ہے۔ اس صورتحال کو دیکھتے ہوئے آپ اپنی گاڑی کو ہوائی جہاز میں تبدیل کریں اور ٹریفک جام، ٹول پلازوں اور جاری تعمیراتی کام کے باعث تاخیر سے بچتے ہوئے اپنی منزل پر پہنچ جائیں۔

ویسے تو اس خواب کو حقیقت بنانے کیلئے متعدد کمپنیوں کی جانب سے کام کیا جارہا ہے مگر اب تک کچھ خاص پیشرفت نہیں ہوسکی ہے، تاہم اب ایک کمپنی سیمسون اسکائی نے اعلان کیا ہے کہ کمپنی نے پروٹوٹائپ فلائنگ کار بنالی ہے۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ امریکی فیڈرل ایوی ایشن ایڈمنسٹریشن (ایف اے اے) نے گاڑی کا معائنہ کیا ہے، اس گاڑی نے رن وے پر آزمائشی مراحل کو کامیابی سے مکمل کیا ہے اور اب یہ گاڑی اڑان بھرنے کے لیے تیار ہے۔

سوئچ بلیڈ کو امریکا میں 3 پہیوں کی موٹرسائیکل کے طور پر پیش کیا گیا ہے، اس میں پائلٹ کے ہمراہ ایک اور شخص مسافر بھی بیٹھ کر سفر کرسکتا ہے جبکہ اسے سڑک پر دوڑانے کے ساتھ اڑایا بھی جاسکتا ہے۔

گاڑی کو بوقت ضرورت اڑانے کیلئے اس میں ایک بٹن دیا گیا ہے جسے دبانے سے گاڑی کی باڈی کے اندر چھپے ونگز باہر آجاتے ہیں اور گاڑی ہوا میں اڑنے لگتی ہے۔ زمین پر اس گاڑی کی رفتار 125 میل فی گھنٹہ جبکہ فضا میں 200 میل فی گھنٹہ ہوگی۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ یہ اڑنے والی پہلی گاڑی ہے جو امریکا میں عام صارفین کو دستیاب ہے، اس کی قیمت ایک لاکھ 70 ہزار ڈالر رکھی گئی ہے اور اسے اب تک 2 ہزار افراد نے بک بھی کرالیا ہے۔

اس گاڑی کو عام سڑک پر اڑانے کی اجازت نہیں دی گئی ہے، گاڑی کو اڑانے کے لیے کسی ائیر پورٹ کے رن وے کی ضرورت ہوگی جبکہ پائلٹ لائسنس بھی درکار ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں