The news is by your side.

Advertisement

ثانیہ عاشق ہراسمنٹ اور دھمکیوں کے خلاف ایف آئی اے پہنچ گئیں

لاہور: پاکستان مسلم لیگ ن کی رکن پنجاب اسمبلی ثانیہ عاشق ہراساں کیے جانے اور دھمکیوں کے خلاف ایف آئی اے آفس پہنچ گئیں۔

تفصیلات کے مطابق ن لیگی ایم پی اے ثانیہ عاشق نے ایف آئی اے کو ہراساں کیے جانے اور دھمکیاں ملنے کے خلاف درخواست دے دی ہے۔

ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ میں دی گئی درخواست میں ثانیہ عاشق نے کہا ہے کہ ان کے خلاف سوشل میڈیا پر نامعلوم افراد نے مہم چلا رکھی ہے۔

درخواست کے متن کے مطابق ثانیہ عاشق نے کہا کہ ٹک ٹاک پر میری ویڈیوز بنا کر وائرل کی گئیں، سوشل میڈیا اور ٹک ٹاک اکاؤنٹس بھی بنائے گئے ہیں جن میں میری تصاویر استعمال کی جا رہی ہیں۔

انھوں نے درخواست میں لکھا کہ میرا نام منسوب کر کے میرے خلاف نازیبا ویڈیوز وائرل کی گئیں۔

ثانیہ عاشق کا یہ بھی کہنا ہے کہ انھیں روزانہ مختلف نمبرز سے متعدد کالز اور میسیجز موصول ہو رہے ہیں۔ ن لیگی ایم پی اے نے ان کالز کا ریکارڈ اور سوشل میڈیا اکاؤنٹس کے اسکرین شاٹس بھی ایف آئی اے کو فراہم کر دیے ہیں۔

درخواست موصول ہونے کے بعد فیڈرل انویسٹیگیشن ایجنسی نے شکایت کے مطابق اس پر کارروائی شروع کر دی ہے۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ ن سے تعلق رکھنے والی ثانیہ عاشق پاکستان کی تاریخ کی کم عمر ترین رکن اسمبلی تھیں، جب 25 جولائی 2018 کو ہونے والے عام انتخابات میں انھوں نے نشست جیتی تھی، اس وقت ان کی عمر 25 سال تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں