The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس : بھارت میں نوجوان کو زبردستی سینیٹائزر پلا کرمار دیا گیا

رام پور : بھارت میں مشتعل افراد نے نوجوان لڑکے کو سینیٹائزر پلا کر قتل کردیا، مقتول کا جرم صرف اتنا تھا کہ اس کے ہاتھ سے سینیٹائزر کی چھینٹیں قاتل کے پاؤں پر پڑ گئی تھیں۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں ایک نوجوان لڑکے کو چار افراد نے زبردستی سینیٹائزر پلا کر موت کے منہ میں دھکیل دیا، بھارتی ریاست اترپردیش کے رام پور ضلع کے بھوٹ تھانہ علاقے میں گلیوں اور محلوں کو سینیٹائز کرنے والا 21 سالہ نوجوان کنور پال اسپرے کررہا تھا۔

اس دوران اسپرے گن سے سینیٹائزر کی چھینٹیں پاس سے گزرنے والے ایک شخص کے پاؤں پر پڑگئیں، جس پر دونوں کے درمیان تلخ کلامی ہو گئی اور بات ہاتھا پائی تک جا پہنچی۔

بعد ازاں معاملہ اتنا بڑھ گیا کہ دوسرے شخص نے اپنے ساتھیوں کی مدد سے کنور پال کو زبردستی سینیٹائزر پلا دیا، جسے انتہائی تشویشناک حالت میں اسپتال لے جایا گیا تاہم وہ دوران علاج ہلاک ہوگیا۔

اس حوالے سے کنور پال کے اہل خانہ نے گاؤں کے سربراہ پر اس کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ’ پردھان اور چار نامعلوم افراد نے مل کر کنور پال کا قتل کیا ہے، انہوں نے یہ بھی کہا کہ کنور پال جب سینیٹائز کر رہا تھا تب ہی نزدیک سے گزر رہے ایک شخص کے پیر پر سینیٹائزر اسپرے چلا گیا۔

اس سے دونوں کے درمیان جھگڑا ہونے لگا قاتل نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر سینیٹائزر کا اسپرے کنور پال کے منہ میں ڈال دیا، جس سے اس کی حالت بگڑنے لگی۔

موقع پر موجود لوگوں نے  اسپتال پہنچایا جہاں سے ڈاکٹروں نے اسے ہائر سینٹر ریفر کردیا اور علاج کے دوران ہی اس کی موت واقع ہو گئی، بھارتی میڈیا کے مطابق پولیس نے پردھان سمیت چار دیگر افراد کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش کا آغاز کردیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں