site
stats
پاکستان

بھارت نے حملہ کیا تو بھرپور جواب دیا جائیگا، سرتاج عزیز

اسلام آباد: مشیرخارجہ سرتاج عزیز کا کہنا ہے کہ بھارت کسی خوش فہمی میں نہ رہے،حملہ کیا تو بھرپورجواب دیا جائے گا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم کے مشیر برائے قومی سلامتی سرتاج عزیز کا کہنا تھا کہ مودی سرکار پاکستان مخالف نعرے پربنائی گئی، افغان حکام سے پاکستان مخالف مہم بند کرنے اور سفارتی عملے کو تحفظ فراہم کرنے پربات ہوئی۔

عزیز نے کہا ہے کہ مودی سرکار کی پالیسی پہلے دن سے پاکستان مخالف ہے لیکن اس کے باوجود پاکستان بھارت سے کشمیر سمیت تمام امور پر مذاکرات کے زریعے حل چاہتے ہیں، بھارت حملہ کرنے کی خوش فہمی میں نہ رہے، انہوں نے کارروائی کی تو اس کا بھرپور جواب دیں گے۔

سرتاج عزیز نے داؤد ابراہیم کی پاکستان میں موجودگی کے بھارتی الزامات کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا۔

قومی سلامتی کے مشیر کا کہنا تھا کہ پاکستان اور بھارت کی بارڈر سیکیورٹی فورسز  کے درمیان کل ہونے والی ملاقات بہت اہمیت کی حامل ہیں، جس کا مقصد لائن آف کنٹرول اور ورکنگ باونڈری پر کشیدگی کم کرنا ہے، تاہم ہماری کوشش ہوگی کہ دونوں جانب گائید لائن کا کوئی نظام قائم کیا جائے۔

یاد رہے کہ گذشتہ ماہ سرتاج عزیز اور ان کے بھارتی ہم منصب کے درمیان 24-23 اگست کو ہونے والی ملاقات عین وقت پر بھارت کی جانب سے منسوخ کردی گئی تھی کیونکہ پاکستان نے حریت رہنماؤں کو دعوت دی تھی۔

دورہ افغانستان پر بات کرتے ہوئے مشیر خارجہ نے کہا کہ دورۂ افغانستان میں پاکستان مخالف بیانات بند کیے جانے پر اتفاق ہوا اور افغان صدر نے یقین دلایا کہ بداعتمادی کی فضا کو ختم کیا جائیگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن قائم کرنے کیلئے اپنا کردار ادا کرتا رہے گا اور دونوں ممالک کے درمیان جوائنٹ اکنامک کمیشن پر بات کی جائےگی جب کہ نومبر کے پہلے ہفتے میں افغان وزیر تجارت پاکستان کا دورہ کرینگے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top