The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب نے تیز ترین جنگی کشتیاں حاصل کرلیں

ریاض : سعودی عرب اور فرانس کے درمیان ایک معاہدہ طے پایا ہے جس کے مطابق فرانس نے تیز ترین جنگی کشتیاں سعودی حکومت کے حوالے کی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق فرانس نے ایک معاہدے کے تحت سعودی عرب کو3جنگی کشتیاں سپرد کی ہیں اس حوالے سے سعودی عرب کے مشرقی ریجن میں ایک خصوصی تقریب کا انعقاد کیا گیا جس کی صدارت سعودی بحریہ کے کمانڈر فہد بن عبداللہ الغفیلی نے کی۔

تقریب میں فرانس نے ایچ ایس132 ساخت کی تیز رفتار تین جنگی کشتیاں جمعرات کے روز سعودی عرب کے سپرد کیں۔

سعودی خبررساں ادارے کے مطابق اس موقع پر الغفیلی نے کہا کہ یہ جنگی کشتیاں سعودی عرب کے تزویراتی اور اہم مفادات کے تحفظ میں معاون ثابت ہوں گی۔ ان سے ہماری حربی استعداد اور ہمارا جنگی معیار بلند ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ یہ مخالف کشتیوں کو گھیرنے میں بے حد مؤثر ہیں، یہ دنیا بھر میں جدید ترین مانی جا رہی ہیں اور بہت ساری جنگی خوبیوں سے آراستہ ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ یہ تین کشتیاں پہلی کھیپ کے طور پر ہمیں ملی ہیں، دوسری کھیپ آئندہ چند ماہ کے دوران مل جائے گی، ان کشتیوں کی بدولت سعودی عرب کا سمندری دفاع مزید مضبوط ہو جائے گا۔

سعودی عرب نے فرانس کی سی ایم این کمپنی کے ساتھ ایچ ایس132 ساخت کی تیز رفتار جنگی کشتیاں بنانے اور برآمد کرنے کا معاہدہ کر رکھا ہے، معاہدے کے تحت جنگی کشتی کا ایک حصہ فرانس اور دوسرا حصہ سعودی عرب میں تیار کیا جائے گا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں