The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب میں پاکستانیوں کو مشکلات، بھارتیوں کے لیے آسانی

اسلام آباد: سینیٹ میں سعودی عرب میں پھنسے پاکستانیوں کے مسائل پر بحث ہوئی اور بتایا گیا کہ وہاں پاکستانی باشندوں سے امتیازی سلوک ہوتا ہے اور بھارتی باشندوں کے لیے نرمی برتی جاتی ہے،لاکھوں پاکستانی کفیل کے ہاتھوں غلامی کی زندگی گزار رہے ہیں اور کئی ہزار پھنسے ہوئے ہیں۔

کہیں جانے اورموٹر سائیکل خریدنے کیلئے بھی کفیل درکار ہے

سینیٹ کے رکن میر کیبر شاہی نے بتایا کہ سعودی عرب میں کہیں نکلنے یا موٹر سائیکل خریدنے کے لیے بھی کفیل کی ضرورت ہوتی ہے، لاکھوں پاکستانی سعودی عرب میں غلاموں کی زندگی گزار رہے ہیں اور کفیلوں نے اس معاملے کو کاروبار بنا رکھا ہے۔

اڑھائی ماہ سے ہمارے دو افراد ویزا ختم ہو نے پر قید ہیں،کبیر شاہی

انہوں نے بتایا کہ اڑھائی ماہ سے ہمارے علاقے کے دو افراد ویزا ختم ہو نے پر وہاں قید میں جنہیں رہا نہیں کیا جا رہا پارلیمان نوٹس لے۔

بھارتیوں سے سلوک بہتر ہم سے خراب ہے، موسیٰ خیل

رکن اعظم خان موسی خیل نے کہا کہ سعودی عرب میں 8 ہزار سے زائد متاثرین پھنسے ہوے ہیں،پاکستان کی نسبت بھارتیوں سے سعودی عرب کا سلوک مختلف اور بہتر ہے ،وہاں مشکلات کا شکار پاکستانیوں میں زیادہ تعداد پشتونوں کی ہیں۔

دس ہزار پاکستانیوں کومشکلات ہیں، ریاض پیرزادہ

رکن ریاض پیرزادہ نے کہا کہ سعودی عرب میں 10 ہزار سے زاید پاکستانی مشکلات کا شکار ہیں،وزیر سمندر پار پاکستانی نے سعودی عرب کا دورہ کیا اور سعودی حکام سے پاکستانی مزدوروں کو درپیش مشکلات کا معاملہ اٹھایاان کے دورے کے بعد سعودی عرب نے پاکستانیوں کے لیے امدادکی۔


یہ بھی پڑھیں:سعودی عرب میں پھنسے مزید سیکڑوں پاکستانی مشکلات کا شکار


انہوں نے مزید کہا کہ وزارت خارجہ نے مشکلات کا شکار پاکستانیوں کے لیے مالی امداد اورطبی سہولتوں کی فراہمی کا آغاز کیا،سعودی کمپنیوں کی مشکلات تیل کی قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے باعث ہوئیں، سعودی عرب جانے سے قبل پاکستانی مزدوروں کو تفصیلی بریفنگ دی جاتی ہے،سعودی عرب چھوڑنے کے خواہش مند افراد میں اکثر کے اقاموں کی مدت ختم ہو چکی ہے،پاکستانی مزدوروں کے مسائل حل کرنے کے لیے اقدامات کیے جا رہے ہیں۔


سعودی عرب کی جیلوں میں پاکستانی خواتین بھی قید، رہائی کی منتظر


بعدازاں سینیٹ کا اجلاس کل تین بجے تک ملتوی کردیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں