دہشت گردی کے خلاف جنگ میں افغانستان کے موقف کی حمایت کرتے ہیں، سعودی وزارت خارجہ saudi
The news is by your side.

Advertisement

دہشت گردی کے خلاف جنگ میں افغانستان کے مؤقف کی حمایت کرتے ہیں، سعودی وزارت خارجہ

ریاض: سعودی وزارت خارجہ نے افغانستان کے ریسلنگ کلب میں ہونے والے بم دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں افغانستان کے موقف کی حمایت کرتے ہیں۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب نے افغانستان کے دارالحکومت کابل کے ریسلنگ کلب میں دو بم دھماکوں کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور بم دھماکوں میں ہلاک ہونے والے افراد کے خاندانوں سے تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کیا ہے۔

واضح رہے کہ کابل کے مغرب میں واقع اس ریسلنگ کلب میں گزشتہ روز معمول کی کسرتی مشق کے دوران ایک حملہ آور بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا تھا۔

خودکش بمبار نے پہلے کلب کے داخلی دروازے پر موجود ایک غیر مسلح نوجوان محافظ کو گولی مار کر ہلاک کردیا تھا اور پھر اندر داخل ہوکر کمسن اور نوجوان پہلوانوں کے درمیان گھس کر دھماکا کیا تھا، ان میں بعض کی عمریں دس سال تھیں۔

اس بم دھماکے کے بعد امدادی کارروائیاں جاری تھیں کہ میوند کلب کے باہر بارود سے بھری ایک کار کو دھماکے سے اڑا دیا گیا تھا، اس کار بم دھماکے میں امدادی کارکنان اور کوریج کے لیے آنے والے صحافیوں کو نشانہ بنایا گیا جس میں دو صحافی کی جان کی بازی ہار گئے تھے۔

ریسلنگ کلب کے منیجر پہلوان شیر کا کہنا تھا کہ بم حملے کے وقت ہال کے اندر کم سے کم ڈیڑھ سو افراد موجود تھے، انہوں نے اس خدشے کا اظہار کیا تھا کہ مرنے والوں کی تعداد زیادہ ہوسکتی ہے جبکہ زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں