The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب : شہری کورونا وائرس سے محفوظ، لیکن کیسے؟

ریاض : سعودی حکومت کے ایک عہدیدار کا کہنا ہے کہ حکومت کے خصوصی اقدامات کی بدولت مملکت کے شہری عالمی وباء سے کافی حد تک محفوظ ہوگئے ہیں تاہم وائرس سے بچنے کیلئے احتیاط اب بھی لازم ہے۔

سعودی عرب کے معاون سیکریٹری صحت ڈاکٹر عبداللہ عسیری نے کہا ہے کہ معاشرے کے بیشتر افراد شدید وائرس حملے سے محفوظ ہوگئے ہیں، جزوی اور کلی طور پر زیادہ تر سعودی شہری اور مقیم غیرملکی کورونا وائرس کی گرفت سے بڑی حد تک محفوظ ہوگئے ہیں۔

مقامی اخبار کی رپورٹ کے مطابق عسیری نے کہا کہ سعودی معاشرے میں کورونا وائرس کے خلاف مدافعت کا ہدف اللہ تعالی کے فضل و کرم اور پھر ویکسینوں کی بدولت ممکن ہوسکا ہے۔

عسیری نے کہا کہ اب کورونا وائرس سے براہ راست وہ افراد متاثر ہورہے ہیں جنہوں نے یا تو ویکسین حاصل نہیں کی یا ویکسین کی خوراکیں مکمل نہیں کیں جو لوگ ویکسین کی مطلوبہ خوراکیں لے چکے ہیں وہ وائرس لگنے کی صورت میں اس کے شدید اثرات سے یقیناً محفوظ ہیں۔

عسیری نے کہا کہ کورونا وائرس اب معاشرے کے تمام افراد سے صلح چاہتا ہے، بہتر ہوگا کہ یہ پیشکش نہ ٹھکرائی جائے بلکہ اس سے بھرپور فائدہ اٹھایا جائے۔

اس کا طریقہ کار یہ ہے کہ سب لوگ حفاظتی تدابیر کی بھرپور پابندی کریں، خصوصاً حفاظتی ماسک استعمال کریں، سماجی فاصلے کا اہتمام کریں اور جہاں بھی ہوں وہاں صاف ستھری ہوا کا بندوبست کریں۔

ایسا کرکے وائرس کے خلاف جنگ جیت سکتے ہیں، ضروری ہوگا کہ اس قسم کی احتیاطی تدابیر کو ہر موسم سرما کی آمد پر اپنا معمول بنالیا جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں