The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب نے غیرملکیوں کے اہل خانہ کے لیے نئی شرط عائد کردی

ریاض: سعودی حکومت نے ملک میں کام کرنے والے غیرملکیوں کے اہل خانہ پر وزٹ ویزا کی تجدید کے لیے ہیلتھ انشورنس کی شرط عائد کردی۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب کی حکومت نے ملک میں کام کرنے والے غیرملکیوں کے اہل خانہ پر ہیلتھ انشورنس کی شرائط عائد کردیں، ہیلتھ انشورنس کی شرط کا اعلان گزشتہ روز ڈائریکٹوریٹ جنرل آف پاسپورٹس کی جانب سے کیا گیا۔

ڈائریکٹوریٹ کی طرف سے جاری بیان کے مطابق آئندہ جب غیرملکی ورکرز اپنے خاندان کے افراد کے وزٹ ویزے کی الیکٹرانک تجدید کرائیں گے تو انہیں انشورنس کا سرٹیفکیٹ بھی دکھانا ہوگا بصورت دیگر تجدید نہیں کی جائے گی۔

اس نئی شرط کے حوالے سے جنرل سیکریٹریٹ آف دی کونسل آف کو آپریٹو ہیلتھ انشورنس اور نیشنل انفارمیشن کے اشتراک سے تمام انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں۔

مزید پڑھیں: سعودی حکام کا غیرملکی سیاحوں کی ویزہ فری انٹری پرغور

رپورٹ کے مطابق حج اور عمرہ ویزے اور سفارتی ویزے پر آنے والے وزیٹرز اس شرط سے مستثنیٰ ہوں گے۔

وزٹ ویزے کی تجدید کی مدت ختم ہونے میں 7 روز باقی ہونے سے لے کر مدت ختم ہونے کے تین دن بعد تک تجدید کروائی جاسکے گی۔

واضح رہے کہ سعودی عرب میں پہلے ہی غیرملکی ورکرز پر نئی شرائط لاگو کی جاچکی ہیں جس میں سالانہ فیس، غیرملکیوں کے کاروبار میں سعودی عرب کے مقامی لوگوں کی شمولیت شامل ہے۔

سعودی عرب کے اس اقدام کے سبب بیشتر غیرملکی سعودی عرب چھوڑنے پر مجبور ہوچکے ہیں اور بعض تنہا سعودی عرب میں ملازمت کررہے ہیں اور اہل خانہ کو اپنے وطن واپس بھیج دیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں