The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: انٹرنیٹ کالنگ پر عائد پابندی ختم کرنے کا اعلان

ریاض: سعودی عرب نے انٹرنیٹ کے ذریعے وائس اور ویڈیو کال پر عائد پابندی ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

خلیج ٹائمز کے مطابق سعودی پریس ایجنسی نے بدھ کو سعودی عرب کے وزیر اطلاعات و انفارمیشن ٹیکنالوجی عبداللہ عامر السواحہ کے حوالے سے بیان جاری کیا ہے کہ وی او آئی پی (وائس اوور انٹرنیٹ پروٹوکول) پر عائد پابندی ایک ہفتے کے اندر یعنی اگلے بدھ سے ختم کردی جائے گی۔

اس ضمن میں سعودی وزیر نے ٹوئٹس بھی کیے ہیں جن میں بتایا ہے کہ ٹیلی کام کمپنیوں کی مدد سے اس پابندی کا خاتمہ کیا جائے گا۔

پابندی 20 ستمبر سے ختم ہوجائے گی

سعودی وزیر نے اپنے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ پر کہا ہے کہ ہم نے ٹیلی کام پارٹنرز کو طلب کرلیا ہے تاکہ صارفین کو ترجیح دیتے ہوئے کال بلاکنگ کا ہفتے بھر میں (20 ستمبر)خاتمہ کیا جاسکے۔

انہوں نے ٹوئٹر پر مزید کہا کہ انتظامیہ اور ٹیلی کام سروس پرووائیڈرز وائس اوور انٹرنیٹ پروٹوکول کو ان بلاک کرنے کے لیے مشترکہ طور پر کام کریں گے تاکہ ریاست میں مقیم سعودی شہری اور دیگر باشندے ایسی اپیلی کیشنز کو استعمال کرسکیں جس سے وائس اور ویڈیو کالز ہوسکتی ہیں۔

انہوں نے وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ ایسی اپیلی کیشنز جو وی او آئی پی کا آپشن رکھتی ہیں اور ان کے ذریعے انٹرنیٹ کے راستے وائس اور ویڈیو کالنگ ممکن ہو سعودی عرب میں اب ان کا استعمال شروع ہوسکے گا۔

وزیر کا کہنا تھا کہ تمام شراکت دار فیصلے پر عمل درآمد کے لیے تعاون کررہے ہیں اور کوشش ہے کہ ہر کوئی voip سپورٹڈ ایپلی کیشن استعمال کرسکے اور وائس یا ویڈیو کال کا معیار بھی بہترین ہو، یہ اقدام ریاست میں جاری ویژن 2030ء کا تسلسل ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں