The news is by your side.

Advertisement

شارک کی نئی قسم دریافت، حیران کن تصاویر سامنے آگئیں

نیوزی لینڈ کے سائنس دانوں نے سمندر میں سے ایک چھوٹی مگر نایاب شارک دریافت کرلی ہے جسے پہلے کبھی نہیں دیکھا گیا۔

برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق سائنس دانوں نے اسے بیبی گھوسٹ شارک (Baby Ghost Shark)کا نام دیا ہے، یہ سمندری حیات کی ایک غیر معروف نسل ہے جو سمندر کی گہرائیوں میں رہتی ہے۔

نوزائیدہ شارک کو جنوبی جزیرے کے قریب پانی کے اندر تقریباً 1.2 کلومیٹر کی گہرائی سے دریافت کیا گیا۔ سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ یہ دریافت پرجاتیوں کے نوعمر مرحلے کی سمجھ کو گہرا کرتی ہے۔

A newly-hatched deepwater ghost shark discovered by a team of scientists off the coast of New Zealand's South Island

سائنس دانوں کی ٹیم کے ایک رکن نے اسے ”صاف تلاش“ قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ دریافت پانی کے اندر آبادیوں کی تحقیق کے دوران حادثاتی طور پر ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ گہرے پانی کی انواع کو تلاش کرنا عام طور پر مشکل ہوتا ہے اور خاص طور پر اسے چھوٹی نایاب شارک کی طرح جو بہت خفیہ ہوتی ہیں کیوں کہ ہم انہیں اکثر نہیں دیکھ سکتے۔

نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف واٹر اینڈ ایٹموسفیرک ریسرچ کے سائنس دانوں کا ماننا ہے کہ شارک کا بچہ حال ہی میں پیدا ہوا ہے کیوں کہ اس کے پیٹ پر ابھی تک انڈے کی زردی موجود ہے۔

Ghost shark egg capsules

ایک سائنس دان نے کہا کہ شارک اپنے ابتدائی دنوں میں مختلف خصوصیات کی نمائش کر سکتی ہے جس سے اس دریافت اہمیت مزید بڑھ جاتی ہے، بھوت شارک کی زیادہ تر انواع گہرے سمندر میں رہتی ہیں، جبکہ بہت ہی چند انواع اوپری ساحلی پانیوں میں رہنا پسند کرتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں