بلوچستان سےکالعدم تنظیموں کے 7’کارکنان‘ گرفتار -
The news is by your side.

Advertisement

بلوچستان سےکالعدم تنظیموں کے 7’کارکنان‘ گرفتار

کوئٹہ :بلوچستان کے ضلع چاغی سے سرکاری حکام نے کالعدم شدت پسند تنظیموں سے تعلق کے شبے میں سات افراد کو گرفتار کرلیا۔

تفصیلات کےمطابق کوئٹہ میں سرکاری ذرائع کے مطابق یہ کارروائی چاغی میں پاک افغان سرحدی علاقے میں کی گئی۔ذرائع کا کہنا تھا کہ یہ لوگ اس علاقے میں ایک کمپاؤنڈ میں تھے جہاں حساس اداروں اور سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں نے مشترکہ کاروائی کی۔

حساس اداروں کی کارروائی کے دوران فائرنگ کا تبادلہ ہوا اور ان افراد نے ہتھیار ڈال دیے۔ذرائع کے مطابق ان افراد کا تعلق کالعدم شدت پسند تنظیم سے ہے اور ان سے لٹریچر اور دیگر تخریبی مواد بھی برآمد کیا گیا ہے۔

ضلع چاغی کی شمال میں افغانستان جبکہ مغرب میں ایران سے سرحد لگتی ہے۔اس سے قبل ضلع چاغی سے متصل ضلع نوشکی سے بھی سرکاری حکام نے ایک ایسی کارروائی میں چھ افراد کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا تھا۔

بلوچستان کے وزیر داخلہ میر سرفراز بگٹی نے ان چھ افراد کی گرفتاری کے بعد ایک پریس کانفرنس میں بتایا تھا کہ ان افراد کا تعلق القاعدہ اور داعش سے تھا۔

مزید پڑھیں: بلوچستان کے وزیربلدیات کا مغوی بیٹا بازیاب

واضح رہے دو روز قبل بلوچستان کےصوبائی وزیر بلدیات سردار مصطفیٰ خان ترین کے مغوی بیٹے اسد ترین کو افغانستان سے متصل بلوچستان کے ضلع قلعہ عبداللہ کے علاقے دو لنگی سے بازیاب کرایا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں