The news is by your side.

Advertisement

میچ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی لگنی چاہیئے، شاہد آفریدی

کراچی : معروف کرکٹر شاہد خان آفریدی نے اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی لگانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہاہے کہ اظہر علی کو ون ڈے ٹیم سے باہر کر دینا اچھا فیصلہ نہیں ہے۔

معروف بلے باز شاہد آفریدی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میچ فکسنگ سے متعلق میرا موقف پہلے سے ہی واضح ہے اور اس سے قبل بھی بتا چکا ہوں کہ اس معاملے پر تحقیقات جاری ہیں اس لیے اس پر کچھ کہنا مناسب نہیں ہوگا۔

سابق کپتان شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ اسپاٹ فکسنگ ملک کی بدنامی کا باعث بنتا ہے اور اس سے کرکٹ کئ مداحوں میں مایوسی پھیلتی ہے اور ٹیم کا مورال بھی ڈاؤن ہو جاتا ہے اس لیے اس طرح کی سرگرمیوں میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی لگنی چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ پی ایس ایل کے بعد ملک میں حالات تبدیل ہوئے ہیں اور اب غیر ملکی مہمان فٹبالر بھی پاکستان کے دورے پر آرہے ہیں جو نہایت خوش آئند ہے اور معروف فٹبالر رونالڈینو کو نہ صرف یہ کہ خوش آمدید کہوں گا بلکہ ان کے ساتھ کرکٹ اور فٹبال بھی کھیلوں گا۔

ایک سوال کے جواب میں شاہد آفریدی نے جواب دیا کہ جب ٹیم ہارتی ہے تو فٹنس کا شور ہوجاتا ہے جبکہ جیتنے پر کچھ نہیں ہوتا انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ فٹنس کیمپ صرف ان فٹ کھلاڑیوں کے لیے لگانا چاہیے۔

دورہ ویسٹ انڈیز کے لیے سابق کپتان اظہر علی کو ڈراپ کرنے پر شاہد آفریدی نے کہا کہ اظہر علی کا کپتانی سے دستبردار ہونے کا فیصلہ بہت اچھا تھا تاہم انہیں ون ڈے سے بہ طور بلے باز فارغ کرنا مناسب نہیں ہے انہیں کچھ اور موقع دینا چاہیئے تھا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں