سندھ ہائی کورٹ نے بلدیاتی حلقہ بندیاں کالعدم، انتخابات وقت پر ہوں گے -
The news is by your side.

Advertisement

سندھ ہائی کورٹ نے بلدیاتی حلقہ بندیاں کالعدم، انتخابات وقت پر ہوں گے

کراچی: سندھ ہائیکورٹ نے صوبائی حکومت کی جانب سے کی جانے والی بلدیاتی حلقہ بندیاں غیر قانونی قراردے دیں اورالیکشن کمیشن کو پانچ روز میں نئی حلقہ بندیاں کرکے عدالت کا آگاہ کرنے کا حکم دیا ہے۔

بلدیاتی حلقہ بندیوں میں سندھ کے شہری اور دیہی علاقوں کو ملانے پرحکومت اوراپوزیشن جماعتیں عدالت پہنچ گئیں۔

عدالت نے بلدیاتی حلقہ بندیاں غیرقانونی قرار دے دیں لیکن بلدیاتی انتخابات کا انعقاد وقت پرہی کرانے کا حکم بھی دیدیا ہے۔

سندھ ہائی کورٹ نے متحدہ قومی موومنٹ، فنکشنل لیگ سمیت دیگرجماعتوں کی درخواستوں پر فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ نئی انتخابی حلقہ بندیوں کا اثرانتخابات پرنہیں پڑنا چاہیے بلکہ انہیں شیڈول کے مطابق مقررہ وقت پرکرایا جائے۔

سندھ ہائی کورٹ میں دائردرخواستوں میں موٗقف اختیارکیا گیا تھا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے کی جانے والی بلدیاتی حلقہ بندیاں غیرقانونی ہیں جس میں دیہی اورشہری حلقوں کو آپس میں ملادیا گیا ہے جس پرعدالت نے الیکشن کمیشن کو پانچ روزمیں نئی حلقہ بندیاں کرکے آگاہ کرنے کا حکم دیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں