site
stats
پاکستان

ماتحت عدالتوں کی جانب سے انوکھی سزائیں، ہائیکورٹ کا نوٹس

کراچی: سندھ ہائیکورٹ نے ماتحت عدالتوں کی جانب سے انوکھی سزاؤں کا نوٹس لے لیا۔ سندھ ہائیکورٹ نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ سزائیں قانون کے مطابق نہیں ہیں۔ بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہو رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججز کی جانب سے دی جانے والی انوکھی سزاؤں پر سندھ ہائیکورٹ نے نوٹس لے کر رپورٹ طلب کرلی۔

ضلع شرقی کی عدالتوں کی جانب سےکچھ دن پہلے ملزمان کو اصلاحی سزائیں دینے کے نام پرکسی کو پلے کارڈ لے کرسڑک پر کھڑے ہونے کی سزا سنائی، تو کسی کو مسجد کی صفیں بچھانے پر لگا دیا۔

ایک ملزم کو غیر قانونی اسلحہ رکھنے پر 3 سال باجماعت نماز ادا کرنے کی سزا سنائی گئی۔

سندھ ہائیکورٹ نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ ایسی سزاؤں سے بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہو رہی ہے، سزائیں قانون کےمطابق نہیں ہیں۔ ایسی سزاؤں سے عدلیہ کی بدنامی ہوگی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top