The news is by your side.

’حکومت میں اعتماد کا فقدان، مفتاح فیصلے نہیں کرپارہے‘

اسلام آباد: سابق وزیر خزانہ شوکت ترین کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت آئی ایم ایف سے اپنی شرائط پر معاہدے کیے تھے۔

پروگرام ’سوال یہ ہے‘ میں گفتگو کرتے سابق وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا کہ موجودہ حکومت کو چاہیے آئی ایم ایف کو ملکی مشکلات بتا کر بات کریں لیکن حکومت میں اعتماد کا فقدان ہے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل فیصلے نہیں کرپارہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کو ہوم ورک کرکے حکمت عملی اپنانی چاہیے لیکن جب 13 جماعتوں کے اتحاد کی حکومت ہوگی تو ایسے مسائل تو آئیں گے۔

سابق وزیر خزانہ نے کہا کہ صوبوں نے وفاق سے معاہدے کررکھے ہیں وفاق نے 2 ماہ تک صوبائی حکومت کو جواب نہیں دیا تو اس کا ذمہ دارکون ہے؟ اسد عمر کا بھی کہنا تھا کہ دو ماہ گزر گئے وفاق نے کے پی کو جواب نہیں دیا۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سیلاب سے ملک بھرمیں بہت زیادہ نقصانات ہوئے ہیں اس وقت الزام تراشی میں نہیں پڑنا چاہیے عوام کو ریلیف فراہم کرنا چاہیے تاہم حکومت سیلاب سے پہلے حکمت عملی بنالیتی تو اس صورت حال کا سامنا نہ ہوتا۔

شوکت ترین کا کہنا تھا کہ یہ حکومت عوام کو کیا ریلیف دے گی ابھی تو مزید مہنگائی کا طوفان آئے گا ابھی تو حکومت پٹرولیم لیوی میں مزید اضافہ کرے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ ملک میں مہنگائی کی شرح 43 فیصد ہوچکی ہے جبکہ ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ شرح 50 فیصد سے اوپر جائے گی اور سیلاب کی وجہ سے مہنگائی مزید بڑھے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں