The news is by your side.

کراچی میں تیز رفتار مسافر مزدا نے موٹر سائیکل سواروں کو کچل ڈالا، بہن بھائی جاں بحق

کراچی : شہر قائد میں آج بھی خونی ڈمپر موٹر سائیکل سواروں کو کچل دیا ، حادثے میں اٹھارہ سالہ لڑکی اور گیارہ سالہ بچہ جاں بحق ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں چوبیس گھنٹے میں خونی ڈمپر اور مزدا نے چار شہریوں کی جان لے لی۔

کراچی میں شیریں جناح کالونی ضیاالدین کے قریب تیز رفتار مسافر مزدا نے موٹر سائیکل سواروں کو کچل دیا، جس کے نتیجے میں موٹر سائیکل پر سوار بہن بھائی جاں بحق ہوگئے جبکہ بچوں کے والد معجزانہ طور پر بچ گئے۔

حادثے کے ذمہ دارڈرائیور موقع سے گاڑی سمیت فرارہوگیا ، جاں بحق ہونے والے گیارہ سالہ بچہ کی شناخت حُذیفہ جبکہ آٹھارہ سالہ لڑکی کی شناخت بشری کےنام سے ہوئی ۔

پولیس نے بتایا کہ بچے اپنے پڑوسی کے ساتھ موٹر سائیکل پر مدرسے جارہے تھے،موٹر سائیکل سوار شخص اپنے بیٹے سمیت تین بچوں کو مدرسے لیکر جارہا تھا کہ تیز رفتار بس نے پیچھے سے موٹر سائیکل کو ٹکر ماری۔

پولیس کا کہنا ہے کہ موٹر سائیکل سوار شخص اور اس کا بیٹا محفوظ رہے اور ڈرائیور موقع سے فرار ہوگا ہے جس کی تلاش جاری ہے۔

حکام کے مطابق لاشوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے اور مزید تفصیلات حاصل کر رہے ہیں ، حادثے کا شکار خاندان کیماڑی کا رہائشی بتایا جاتا ہے۔

ادھر سوپرہائی وے جنجال گوٹھ کےقریب تیزرفتارڈمپرنےدوموٹرسائیکل سواروں کو روند ڈالادونوں موٹرسائیکل سوارشہری جاں بحق ہوگئے لاشیں عباسی ہسپتال منتقل کردی گئی

گزشتہ روز سپر ہائی وے پر ڈمپر کی ٹکر سے دو نوجوان جاں بحق ہوئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں