ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدرمیں کمی کی وجہ عالمی ادائیگیاں ہیں، اسٹیٹ بینک -
The news is by your side.

Advertisement

ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدرمیں کمی کی وجہ عالمی ادائیگیاں ہیں، اسٹیٹ بینک

کراچی : اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے اپنے اعلامیے میں کہا ہے کہ عالمی ادائیگیوں کے باعث ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں کمی آئی، تیل کی قیمتوں میں اضافے نے زرمبادلہ مارکیٹ کو دباؤ میں رکھا ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک نے ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں کمی پر اپنا بیان جاری کردیا، اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ انٹربینک میں آج ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر ایک سو تینتیس روپے چونسٹھ پیسے رہی۔

اس کی وجہ عالمی ادائیگیوں کے باعث روپے کی قدر میں ہونے والی کمی ہے۔ اسٹیٹ بینک کے مطابق تیل کی قیمتوں میں اضافے نے زرمبادلہ مارکیٹ کو دباؤ میں رکھا ہوا ہے۔

صورتحال کی مسلسل نگرانی کرتے رہیں گے،زرمبادلہ کی منڈی میں ناخوشگوار اتار چڑھاؤ پر مداخلت کیلئے تیار ہیں۔

مزید پڑھیں: انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر134 روپے کی بلند ترین سطح پرپہنچ گیا

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ خام تیل کی بڑھتی قیمت امپورٹ بل میں اضافے کی وجہ بن رہی ہے جبکہ امپورٹ بل کی ادائیگیوں کے باعث روپیہ دباﺅ کا شکار ہے جس کے باعث ڈالر کی قیمت میں اضافہ ہوا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں