The news is by your side.

Advertisement

بھارت : خود کشی سے پہلے لڑکی کا باپ کے نام درد بھرا خط

آگرہ : خود کشی کرنے سے پہلے باپ کے نام لکھے گئے بیٹی کے خط نے پڑھنے والوں کو بھی آبدیدہ کردیا، میٹرک کی طالبہ نے والد کے مظالم سے تنگ آکر خود کو پھندا لگا لیا۔

تفصیلات کے مطابق اتر پردیش (یوپی) کی ریاست آگرہ میں دسویں کلاس میں پڑھنے والی طالبہ نے والد کے ظلم سے تنگ آکر دوسری منزل پر جاکر کمرہ بند کرکے پھندے سے لٹک کر خودکشی کرلی، پھانسی پر جھولنے سے پہلے لڑکی نے خط لکھا اور اسے تکیے کے نیچے دباکر رکھ دیا۔

لڑکی نے لکھا کہ وہ اپنے والد امر سنگھ سے تمام مظالم کا بدلہ لینا چاہتی تھی لیکن وہ ایسا نہ کرسکی، وقوعہ کے بعد پولیس نے کمرے سے اس کی لاش قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کیلئے اسپتال منتقل کیا اور تکیے کے نیچے رکھا ہوا خط برآمد کرلیا، لڑکی نے دل کو جنھجوڑ کر رکھ دینے والا اپنا درد بیان کیا ہے جسے پڑھ کر لوگوں کی آنکھوں سے آنسو نکل آئے،۔

متوفیہ نے خط میں لکھا کہ وہ اپنے والد سے بدلہ لینے کیلئے پولیس میں بھرتی ہونا چاہتی تھی لیکن آئے دن میں گھر ہونے والے جھگڑوں سے اس کا حوصلہ ٹوٹ گیا اور اس نے ہار مان کر خودکشی کرلی۔

رپورٹ کے مطابق لڑکی کے والد امر سنگھ نے دوسری شادی کی تھی۔ 25سال پہلے امر سنگھ کی پہلی اور تین بچوں کی آگ میں جل کر موت ہوگئی تھی۔

اس وقت بھی امر سنگھ پر قتل کا الزام لگا تھا لیکن معاملہ رفع دفع ہوگیا تھا،کچھ عرصے بعد امر سنگھ نے دوسری شادی کرلی۔ دوسری بیوی سے بھی امر سنگھ کے تین بچے دو بیٹیاں اور ایک بیٹا پیدا ہوا۔

امر سنگھ پر الزام ہے کہ وہ آئے دن گھر میں بیوی اور بچوں کے ساتھ مار پیٹ کرتا تھا، اتنا ہی نہیں امر سنگھ پر یہ بھی الزام ہے کہ اس کے دور کے رشتے دار بھی گھر پر آتے تھے اور گھر میں اکثر شراب کی پارٹیاں چلا کرتی تھیں اور بچوں کے ساتھ مار پیٹ ہوتی تھی، گھر کے اس بگڑے ماحول سے تینوں بھائی بہن کافی دکھی رہتے تھے۔

رپورٹ کے مطابق واقعے والے دن بھی والد نے گھر میں مارپیٹ کی تھی جس سے دکھی ہوکر دسویں کلاس میں پڑھنے والی لڑکی نے دوسری منزل پر جاکر کمرے میں پھندے سے لٹک کر خودکشی کرلی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں