بدھ, مئی 22, 2024
اشتہار

موسم گرما میں یہ 8 سبزیاں نہ کھائیں تو بہتر ہے

اشتہار

حیرت انگیز

گرمی کا موسم اپنی آب و تاب سے ساتھ جاری ہے ان ایام میں کھانے پینے میں احتیاط کرنا انتہائی ضروری ہے کیونکہ کچھ سبزیاں ایسی ہیں جو ہماری صحت کیلئے نقصان دہ ثابت ہوسکتی ہیں۔

ماہرین صحت اس موسم میں کھانوں کے انتخاب میں احتیاط برتنے کا مشورہ دیتے ہیں کیونکہ بعض غذائی اجزا سستی اور کاہلی کے احساس کا باعث بن سکتے ہیں یا موسم میں گرمی کے احساس کو بڑھا سکتے ہیں۔

اس بات سے انکار ممکن نہیں کہ سبزیاں صحت بخش ہوتی ہیں اور کسی بھی متوازن غذا میں اولین ترجیح ہوتی ہیں لیکن ایک مؤقر جریدے میں شائع ہونے والی تحقیق اور اعداد و شمار کے مطابق 8 اقسام کی سبزیوں سے گرمی کے دنوں میں پرہیز کرنا چاہیے جن کا ذکر مندرجہ ذیل سطور میں کیا جارہا ہے۔

- Advertisement -

پالک اور بند گوبھی 

پالک اور بند گوبھی وٹامنز اور معدنیات کے بہترین ذرائع ہیں، لیکن ان میں پانی کی مقدار زیادہ نہیں ہوتی۔ اس لیے انہیں لیٹش یا ارگولا سے تبدیل کیا جا سکتا ہے۔

پھول گوبھی 

بروکولی یا پھول گوبھی کھانے سےانسانی جسم کے اندر گرمی ہوتی ہے۔ اسی وجہ سے ماہرین گرمی سے لطف اندوز ہونے اور وٹامنز اور منرلز کی اعلیٰ مقدار سے فائدہ اٹھانے کے لیے سردیوں کے موسم میں انہیں کھانے کا مشورہ دیتے ہیں۔

جڑ والی سبزیاں

جڑ والی سبزیاں ایک قیمتی غذائیت ہیں وہ نشاستہ دار ہوتی ہیں زیادہ گھنے ہو سکتی ہیں۔ ان کے ہضم کرنے کے لیے زیادہ توانائی کی ضرورت ہوتی ہے۔ اس لیے گرمیوں میں اسے کھانا مناسب نہیں۔

پیٹھا کدو

جڑ والی سبزیوں کی طرح موسم سرما کے اسکواش کی کچھ اقسام زیادہ گھنے ہوتی ہیں اور ہضم ہونے میں زیادہ توانائی لیتی ہیں جس کے نتیجے میں گرمی زیادہ ہوتی ہے۔

مٹر

مٹر پروٹین اور فائبر کا ایک اچھا ذریعہ ہیں لیکن یہ کچھ لوگوں میں پیٹ پھولنے کا سبب بھی بن سکتے ہیں۔

 مکئی

مکئی تکنیکی طور پر ایک اناج ہے لیکن اسے اکثر سبزی کی طرح کھایا جاتا ہے۔ مٹر کی طرح مکئی میں نشاستہ کی مقدار زیادہ ہوتی ہے جس سے پیٹ پھولنے کا اندیشہ ہوسکتا ہے۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں