The news is by your side.

Advertisement

سرجیکل اسٹرائیک کا دعوٰی گلے پڑگیا، اپوزیشن نے ثبوت مانگ لیے

نئی دہلی: پاکستان میں سرجیکل اسٹرائیک کا دعوٰی بھارتی سرکار کے گلے پڑگیا، بھارت کے اندر سے ہی سرجیکل اسٹرائیک کے ثبوت مانگنے کی آوازیں بلند ہو گئیں, اپوزیشن جماعتوں نے اسٹرائیکس کو جعلی قراردے کرثبوت مانگ لیے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں گھس کر کارروائی کرنے کا بھارتی دعوٰی مودی سرکار کے گلے کی ہڈی بن گیا،جھوٹا دعویٰ بھارت میں بھی متنازعہ بن گیا، اپوزیشن جماعتوں نے مودی سرکار کو آڑے ہاتھوں لینا شروع کردیا۔

نئی دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کجریوال کی جانب سے سرجیکل اسٹرائیک کے ثبوت مانگنے کے بعد اب کانگریسی رہنما سنجے نروپم نے دعوے کو جعلی قراردیتے ہوئے سرجیکل اسٹرائیک کے ثبوت مانگ لیے، ان کا کہنا تھا کہ کارروائی جعلی ہونے کا شبہ ہے۔

بھارت کے سابق وزیر داخلہ چدم برم نے سرجیکل اسٹرائیک پر سوال اٹھاتے ہوئے کہا کہ مودی سرکار غیر ضروری واویلا کر رہی ہے، حکومت قوم کو سرجیکل اسٹرائیک کے چکر میں نہ پھنسائے، اس کے ثبوت بھی دکھائے۔

مزید پڑھیں: نریندرمودی نے سرجیکل اسٹرائیک نہ کرنے کا اعتراف کرلیا

 پی چدم برم نے مزید کہا کہ پاکستان کے ساتھ مذاکرات جاری رہنے چاہیئں۔ سابق بھارتی وزیر داخلہ کے بیان پر بی جے پی آگ بگولہ ہو گئی ،بی جے پی کے رہنما اور بھارتی وزیر روی شنکر نے کہا کہ کجریوال اور چدم برم کو سرجیکل اسٹرائیک کے ثبوت کیوں چاہئیں ،کیا انہیں اپنی بھارتی فورسز کی قابلیت پر شک ہے۔

مزید پڑھیں: بھارت کی سرجیکل اسٹرائیک کا کوئی ثبوت نہیں ملا، بان کی مون

 انہوں نے کہا کہ سوال اٹھانے والے بھارتی فوج کی بے عزتی کر رہے ہیں۔ یاد رہے کہ نئی دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجریوال بھی سرجیکل اسٹرائیکس کے ثبوت مانگ چکےہیں۔

مزید پڑھیں : وفاقی کابینہ نے سرجیکل اسٹرائیک کا بھارتی دعویٰ مسترد کردیا

 مودی سرکار نے ثبوت تو نہیں دیئے۔ لیکن ایک وزیر روی شنکر نے بیان داغ دیا کہ اپوزیشن ثبوت مانگ کر فوج کی صلاحیت پر سوال اٹھا رہی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں