The news is by your side.

Advertisement

کس ملک کی لیبارٹریوں میں ایک سال میں 5 لاکھ جانور ہلاک ہوئے؟

زیورخ: ایک سال میں 5 لاکھ جانور لیبارٹریوں میں قربان ہونے پر سوئٹزلینڈ چیخ اٹھا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سوئٹزرلینڈ میں جانوروں پر طبی تجربات پر پابندی کے لیے آج ریفرنڈم کرایا جا رہا ہے، تاہم اتوار کو سرکاری نشریاتی ادارے کے ابتدائی تخمینوں کے مطابق سوئس ووٹرز واضح طور پر اس مہم کو مسترد کرنے کے لیے تیار نظر آئے، جس کا مقصد سوئٹزرلینڈ کو جانوروں پر تجربات پر پابندی لگانے والا پہلا ملک بنانا تھا۔

سوئٹرز لینڈ میں جانوروں کے حقوق کے لیے سرگرم تنظیموں کی جانب سے لیبارٹری تجربات کے خلاف مہم چلائی جا رہی ہے، ان کا کہنا ہے کہ جانوروں پر تجربات کرنا غیر ضروری اور ظالمانہ عمل ہے، اس عمل کے بغیر بھی ادویات تیار کیے جا سکتے ہیں، ملک میں جانوروں پر طبی تجربات کو ممنوع قرار دیا جانا چاہیے۔

سوئٹزرلینڈ کے سرکاری اعداد و شمار کے مطابق 2020 میں اس ملک میں صرف لیبارٹری تجربات کے دوران 5 لاکھ 5 ہزار جانور ہلاک ہوئے تھے، ان میں4 لاکھ چوہے، تقریبا ﹰ4 لاکھ 6 ہزار کتے، ڈیڑھ ہزار بلیاں اور 1600 گھوڑے شامل تھے۔

ایسے بندر، خنزیر، مچھلیاں اور پرندے بھی ہیں جو یا تو طبی تجربات کے دوران ہی یا پھر بعد میں مر جاتے ہیں۔

خیال رہے کہ سوئٹرزلینڈ دواسازی کی صنعت کا بڑا مرکز ہے، دواسازی کے شعبے نے خبردار کیا ہے کہ اس پابندی سے دوا ساز کمپنیوں اور محققین کو دوسرے ممالک میں منتقل ہونا پڑے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں