The news is by your side.

Advertisement

ہدف عمران خان، اسٹیبلشمنٹ غیرجانبدار رہی تو عدم اعتماد کامیاب ہوگی، بلاول بھٹو

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ ہمارا ہدف عمران خان ہے، اسٹیبلشمنٹ غیرجانبدار رہی تو عدم اعتماد کامیاب ہوگی۔

بلاول بھٹو نے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کے ہمراہ نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے بار بار جیتنا ہے اور ہم نے صرف ایک بار کامیاب ہونا ہے اور پھر یہ گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ابھی تک ہمیں کوئی فون کالز نہیں آئی ہیں اگر عمران خان اپنے بل بوتے پر رہتے ہیں تو ویل اینڈ گڈ،غیرآئینی طریقے سے مددعمران خان کونقصان پہنچائےگی۔

بلاول کا مزید کہنا تھا کہ عمران خان کو جانبدار طریقے سے سپورٹ کیا جاتا ہے، عمران خان نے سب پر ٹیکس لگادیا ہے سوائے عدم اعتماد کے، جو تباہی یہ مچا رہا ے اس کا ملبہ ان پر ہی آئے گا جو اس کے ساتھ کھڑے ہیں۔

پی پی چیئرمین نے کہا کہ ہار جیت اللہ کےہاتھ میں ہےہم اپنی پوری کوشش کریں گے، اپوزیشن اس بات پر متفق ہے کہ موجودہ حکومت کو ہٹانے کے بعد جو بھی سیٹ اپ آئے گا وہ نئے الیکشن کرائے گا۔

 بلاول بھٹو نے پی ٹی آئی کے سندھ حقوق مارچ کے حوالے سے کہا کہ سیاسی یتیموں کے ٹولے نے سرکس لگالیا ہے، حیران ہوں کہ یہ کس بات پر احتجاج کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کا جنازہ نکال دیا گیا ہے، انسانی اور جمہوری حقوق پر ڈاکے ڈالے گئے، امن وامان کی صورتحال خراب اور عوام کی زندگی عذاب ہوچکی ہے۔

بلاول بھٹو نے عمران خان سے استعفیٰ دینے کا مطالبہ دہراتے ہوئے کہاکہ وزیراعظم سے کہتے ہیں کہ جلد استعفیٰ دیدیں تو عدم اعتماد کی ضرورت نہیں پڑے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی ایم ایف ڈیل کےخلاف پہلےدن سےمہم چلارہےہیں یہ ڈیل عوام مفادمیں نہیں ہے، اس پی ٹی آئی ایم ایف کابوجھ عام آدمی اٹھارہاہے، ہم چاہتےہیں کہ پاکستان اس ڈیل سےنکلے اور معیشت کےمفادمیں ڈیل کی جائے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ عدم اعتمادحکومت کوہٹانےکاواحدآئینی طریقہ ہے، ہم پرامیدہیں کہ ماضی کی غلطیوں کونہیں دہرائیں گے، ہم جلدازجلدصاف شفاف الیکشن چاہتےہیں، ہم زیادہ دیرکےلیےکوئی نئی حکومت نہیں چاہتے، ہماری جدوجہدملک کوجمہوری نقصان سےنکالنےکےلیےہے،مناسب نہیں ہوگاکہ اپوزیشن لڑناشروع کردیں گےکہ کون ہوگاوزیراعظم، جس کاحق ہےاس کووزیراعظم بننےدیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ پیپلزپارٹی کی طرح دیگرکوبھی ہرقربانی دینےکےلیےتیارہوناچاہیے، سب سےبڑی جماعت کواپناوزیراعظم لانےکاحق حاصل ہے، ہم اپیل کررہےہیں کہ اپنی وزارت ایک طرف اورعوام کامفاددوسری طرف رکھیں، جی ڈی اےہویاایم کیوایم ہم سیاسی ڈائیلاگ پریقین رکھتےہیں، ملکی مفادمیں سب ساتھ دیں اورالیکشن کرائیں۔

انہوں نے کہا کہ عوام کا اعتماد سلیکٹڈ پر سے اٹھ چکا ہے، ہمارا عوامی مارچ غیرجمہوری حکومت پرجمہوری حملہ ہے، ہر شہری کو اس کا حق دینا چاہتے ہیں عوام آئیں اور مارچ میں ہمارا ساتھ دیں۔

بلاول بولے کہ ہماری نیت صاف ہے اور ہم عوام کومشکلات سےنکالناچاہتےہیں، ہمیں یقین ہے کہ ہم وہ پاکستان قائم کرسکتےہیں جس کا قائداعظم، قائدعوام، شہیدمحترمہ نےوعدہ کیاتھا، کل صبح مزارقائدکےباہرسےہم عوام کےلیےکھڑےہونگے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں